درج فہرست ذات و قبائل اور غریبوں کے اعزاز کے لئے صدارتی الیکشن لڑرہی ہوں : میرا کمار

Jul 06, 2017 11:35 PM IST | Updated on: Jul 06, 2017 11:35 PM IST

پٹنہ: کانگریس کی سینئر لیڈر اور اپوزیشن کی 17 پارٹیوں کی مشترکہ صدارتی امیدوار میرا کمار نے آج کہا کہ وہ ملک کی درج فہرست ذات و قبائل اور غریبوں کے حقوق کی حفاظت اور احترام کے اصول کی بنیاد پر یہ الیکشن لڑ رہی ہیں۔ یکساں نظریہ رکھنے والی جماعتوں کے لیڈران اور ممبران اسمبلی کی حمایت حاصل کرنے کے لئے یہاں تشریف لانے والی محترمہ میرا کمار نے نامہ نگاروں سے کہا کہ "مجھے کانگریس صدر سونیا گاندھی کی قیادت میں 17 اہم اپوزیشن جماعتوں کی جانب سے صدر کے عہدے کا امیدوار قرار دیا گیا ہے۔ میں ملک کی درج فہرست ذات و قبائل اور غریبوں کے حقوق اور احترام کی حفاظت کے لئے یہ الیکشن لڑ رہی ہوں"۔

انہوں نے کہا کہ وہ غریبوں اور معاشرے کے محروم طبقے کو بااختیار بنانے اور کے احترام کی حفاظت کے لئے مصروف عمل ہیں۔ محترمہ میرا کمار نے کہا کہ انہیں افسوس ہے کہ ملک کا ماحول اتنا خوفناک ہو گیا ہے کہ اگر کوئی گائے لے کر جا رہا ہے تو اس کی زندگی خطرے میں پڑ سکتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ملک میں پھیلائی جا رہی فرقہ پرستی کی لہر کو بہار میں ہی روکا جا سکتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ موجودہ ماحول اس قدر نیچی سطح پر چلا گیا ہے کہ صدر کا الیکشن اب 'دلت بمقابلہ دلت' بن کر رہ گیا ہے۔

درج فہرست ذات و قبائل اور غریبوں کے اعزاز کے لئے صدارتی الیکشن لڑرہی ہوں : میرا کمار

کانگریس لیڈر نے آج یہاں صدارتی انتخابات میں حمایت کے لئے راشٹریہ جنتا دل (آر جے ڈی) اور کانگریس کے ممبران پارلیمنٹ اور ممبران اسمبلی سے ملاقات کی۔ اس دوران آل انڈیا کانگریس کمیٹی (اے آئی سی سی) کے سکریٹری جنرل اور بہار میں پارٹی امور کے انچارج سی پی جوشی، بہار پردیش کانگریس کمیٹی ( بی پی سی سی) کے صدر اور وزیر تعلیم اشوك چودھری، کانگریس قانون ساز پارٹی کے لیڈر سدانند سنگھ سمیت تمام سینئر کانگریسی لیڈروں کے علاوہ آر جے ڈی کے سینئر لیڈران موجود تھے۔

اس موقع پر نائب وزیر اعلی تیجسوی یادو نے کہا کہ محترمہ میرا کمار بہار کی بیٹی ہیں اور وہ چاہتے ہیں کہ ریاست کی سبھی پارٹیاں ان کی حمایت کریں۔ انہوں نے کہا کہ یہ تاریخی موقع ہے کہ محترمہ میرا کمار ملک کے اعلی ترین عہدے پر فائز ہو سکتی ہیں تو تمام جماعتوں کو ان کی حمایت کر نی چاہئے۔ مسٹر جوشی نے کہا کہ یہ خوشی کی بات ہے کہ 17 جماعتوں نے بہار کی بیٹی کو اعلی ترین عہدے کے انتخاب کے لئے اپنا امیدوار قرار دیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ان 17 پارٹیوں کامستقبل میں ملک کی سیاست میں اہم کردار ہو گا۔ انہوں نے کہا کہ محترمہ میرا کمار سولہ ریاستوں میں جا چکی ہیں اور سب جگہ لوگوں نے ان کی حمایت کی ہے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز