رحمانی 30 کے تمام کی تمام طالبات اسٹاک ایکسچینج سرٹیفیکشن میں کامیاب

Nov 11, 2017 06:55 PM IST | Updated on: Nov 11, 2017 06:55 PM IST

پٹنہ۔  آئی آئی ٹی کی کوچنگ کے حوالے سے پورے ملک میں اپنا نام کمانے والی رحمانی 30 کی سرپرست تنظیم رحمانی پروگرام آف ایکسیلنس نے اب اسٹاک ایکسینج کے میدان میں بھی پیش رفت کی ہے ۔ جس کے سو فیصد طلباء نیشنل اسٹاک ایکسچینج کے سرٹیفیکشن (NSE-NCFM) میں کامیاب ہوئے ہیں۔ علاوہ ازیں رحمانی پروگرام آف ایکسیلنس (رحمانی 30) نے نئے سیشن (2018۔2020) کے مسابقتی امتحان میں اپنا نام درج کرانے کی تاریخ میں توسیع کرکے اسے 14نومبر تک کردی ہے ۔

رحمانی پروگرام آف ایکسیلینس کے سی ای او فہد رحمانی نے بتایا کہ یہ کامیابی کامرس پروگرام کی کامیابی کے منصوبے کی پہلی کڑی ہے۔ انہوں نے مزید بتایا کہ نصاب کی پیچید گی اور امتحان میں کامیابی کے لئے ضروری جہد کے نقطہ نظر سے ، یہ کامیابی تمام طالبات اور مقامی کمیونیٹی اور سماج کے لئے ایک بڑی کامیابی ہے، یہ کامیابی معاشرے میں کامرس اور اکاؤنٹنگ کی مہارت کی معیار میں کمی کو پورا کرنے والا پہلا قدم بھی ہے۔ یہ بھی قابل ذکر ہے کہ طالبات نے اس سرٹیفیکشن کو اپنی بارہویں بورڈ کے امتحانات سے پہلے ہی حاصل کر لیا اس سے انکی مسابقتی اہلیت اور ادارے کی وقار میں اضافہ ہوا ہے۔

رحمانی 30 کے تمام کی تمام طالبات اسٹاک ایکسچینج سرٹیفیکشن میں کامیاب

رحمانی ۳۰ کے طلبہ: فائل فوٹو۔

خیال رہے آئی آئی ٹی میں کامیابی کے لئے مشہور رحمانی 30کے 75طلبہ نے 2017میں آئی آئی ٹی ایڈوانس کے امتحان میں کامیابی حاصل کی وہیں میڈیکل میں سو فیصد طالبات نے این ای ای ٹی میں کامیابی حاصل کی اور ۳۱/۲۲طالبات ۹۰؍ پرسنٹایل سے اوپر رہیں۔ تاریخی طور پر تجارت کے موضوع کو سائنس اور میڈیکل کے مقابلے کم تر سمجھا جاتا ہے اور اس کے بارے میں کافی غلط فہمیاں موجود ہیں۔ایسے ماحول میں کامرس پروگرام کو قائم کرنا رحمانی پروگرام آف ایکسیلینس کی شاخ کے لئے ایک خطروں سے بھرا چیلنج تھا۔معاشرے میں قومی رش اور اکاؤنٹنگ کی تعلیم کی ضرورت کو سانے رکھتے ہوئے رحمانی پروگرام آف ایکسیلینس کے انتظامیہ نے ہی مرکز قائم کرنے کا فیصلہ لیا اور مزید ایکسیلینس حاصل کرنے کے لئے چارٹرڈ اکاؤنٹنٹ اور این سی ایف ایم(NCFM) کے نصاب اور سرٹیفیکیشن کو شامل کیا ہے۔ علم طور پر یہ نصاب

مارکٹ لبر لائزیشن اور اس کے نتیجے میں نئے قوانین کے عمل در آمد ہونے کی وجہ سے معاشرے میں کامرس کی جانب روہے میں تبدیلی شروع ہو گئی ہے اور طلبہ کو اس میدان کے امکانات نظر آنے لگے ہیں۔ رحمانی پروگرام آف ایکسیلینس نے اپنے کامرس کے طلبہ کے لئے بہترین نصاب تیار کیا ہے۔بہت پر امید ہیکہ یہ بچے کامرس کے میدان میں نہ صرف اپنے اسٹیٹ بلکہ ملک کی رہنمائی کریں گے۔ رحمانی پروگرام آف ایکسیلنس (رحمانی ۳۰) نے نئے سیشن (۲۰۱۸ء۔۲۰۲۰ء) کے لئے اعلامیہ جاری کردیا ہے۔ رحمانی ۳۰ کا انٹرنس ٹیسٹ اتوار ۱۹؍ نومبر ۲۰۱۷ء کو منعقد ہوگا۔اس امتحان میں مسلم مائنورٹی کے طلباء اور طالبات دونوں حصہ لے سکیں گے۔ اس سال یہ انٹرنس ٹیسٹ آئی آئی ٹی (IIT) این ای ای ٹی(NEET)ِ سی اے (CA)،سی،ایس (CS) اورسی ۔ایل۔اے۔ٹی(CLAT) ، این ڈی اے (NDA) ان تمام مقابلہ جاتی امتحانات کی تیاری کے لئے ہوگا۔رحمانی ۳۰ کے جانب سے یہ انٹرنس ٹیسٹ ملک بھر کے تقریباً ۲۱؍صوبوں اور ۱۲۲؍ سے زائداضلاع میں لیا جائیگا۔ امتحان سے متعلق تمام تفاصیل رجسٹریشن فارم ، وغیروہ، آن لائن www.rahmanimission.orgپر موجود ہے۔

حضرت امیر شریعت مولانا محمد ولی رحمانی نے تمام طلباء، اساتذہ، اسکول کے ذمہ دار ان اور ٹیسٹ سینٹرکے منتظمین سے اپیل کے ہے کہ وہ رحمانی پروگرام آف ایکسیلنس کی اس انٹرنس ٹیسٹ کو ایکسیلینس کی جانب بڑھتا ہوا ہماری مائنارٹی کا متحدہ قدم جانیں ۔ انہوں نےکہا کہ اس تحریک کی اصل کامیابی ہمارے طلباء اور طالبات کی جاگتی ہوئی وہ امید ہے جو سال در سال ان کی بڑھتی ہوئی شرکت سے نظر آتی ہے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز