مشہور شیعہ عالم دین مولانا سید اطہر عباس رضوی کا انتقال ، ملی و سماجی تنظیموں نے تعزیت کا اظہار کیا

Sep 11, 2017 07:28 PM IST | Updated on: Sep 11, 2017 07:28 PM IST

کلکتہ: معروف شیعہ عالم دین اور مغربی بنگال میں اتحاد بین المسلمین کے داعی مولاناسید اطہرعباس رضوی کا کل رات دل کا دورہ پڑنے کے سبب انتقا ل ہوگیا۔ مولانا کو ان کی رہائش گاہ اقبال پور میں رات تقریباً8.30بجے دل کا دورہ پڑا فوراً ہی انہیں سی ایم آر آئی اسپتال لے جایا مگر جانبر نہ ہوسکے اور داعی اجل کو لبیک کہہ دیا۔

مولانا فقہ جعفریہ کے معروف عالم اور بین الاقوامی سطح کے شیعہ خطیب تھے۔ مغربی بنگال میں انہوں نے مسلمانوں میں اتحاد و اتفاق اور سماجی و معاشرتی اصلاح کیلئے قائم کئی انجمنوں اوراداروں کے سرگرم ممبر تھے۔ مرحوم کے پس ماندگان میں بیوہ کے علاوہ دو بیٹے اوردو بیٹیاں ہیں۔

مشہور شیعہ عالم دین مولانا سید اطہر عباس رضوی کا انتقال ، ملی و سماجی تنظیموں نے تعزیت کا اظہار کیا

مولانااطہرعباس رضوی مغربی بنگال وقف ‘ مغربی بنگال ریاستی حج کمیٹی ‘ ملی اتحاد پریشد اور دیگر کئی اداروں کے ممبر تھے۔ مرحوم آل فیتھ فورم کے نائب صدر بھی تھے۔ ان کے انتقال پرفورم کے صدر ایم پی ادریس علی ‘ شاہی امام مولاناسید محمد نورالرحمن برکتی ‘ عبدالعزیز‘ فادردیو راج فرنانڈیز‘ پروفیسر ایم اے علی اور دیگر نے اظہار تعزیت کرتے ہوئے کہا کہ کولکاتا میں یکے بعد دیگرے اچھے لوگ اٹھتے جارہے ہیں ابھی4ستمبر کو ہم نے ایم پی سلطان احمد کے جنازہ کو کاندھادیاتھا اب اجل نے مولانااطہرعباس کو ہم سے چھین لیا۔کولکاتا سے ایک اچھا انسان اٹھ گیا ۔

ری کمنڈیڈ اسٹوریز