کوئی میرا گلا کاٹ سکتا ہے ، لیکن مجھے یہ نہیں بتا سکتا کہ کیا کرنا ہے: مغربی بنگال وزیر اعلی ممتا بنرجی

درگا پوجا کی مورتی وسرجن سے متعلق کلکتہ ہائی کورٹ کے فیصلے پر رد عمل ظاہر کرتے ہوئے وزیر اعلیٰ ممتا بنرجی نے کہا کہ وہ امن و امان قائم کرنے کی ہر ممکن کوشش کریں گی ۔

Sep 21, 2017 07:07 PM IST | Updated on: Sep 21, 2017 11:57 PM IST

کلکتہ: درگا پوجا کی مورتی وسرجن سے متعلق کلکتہ ہائی کورٹ کے فیصلے پر تنقید کی زد پر مغری بنگال کی وزیر اعلی ممتا بنرجی نے کہا کہ کوئی میرا گلا کاٹ سکتا ہے ، لیکن مجھے یہ نہیں بتا سکتا ہے کہ کیا کرنا ہے۔ انہوں نے کہا کہ میں جب درگا پوجا یا گنیش اتسو کی تقریب کا افتتاح کرتی ہوں تو الزامات نہیں لگتے ہیں ، لیکن جب میں عید کی نماز ادا کرلوں تو اپوزیشن والے الزامات لگانے لگتے ہیں ۔

ہائی کورٹ کے فیصلہ پر وزیر اعلیٰ نے کہا کہ وہ امن و امان قائم کرنے کی ہر ممکن کوشش کریں گی ۔عدالت کے فیصلے کے بعد ممتا بنرجی نے کہا کہ’’کچھ لوگ میرے نظریہ کی غلط تشریح کرسکتے ہیں مگر کوئی بھی یہ نہیں کہہ سکتا ہے میں کیا کروں گی۔تاہم عدالت کی ہدایت کے بعد میں امن وقانون بحال کرنے کی ہر ممکن کوشش کروں گی۔

 کوئی میرا گلا کاٹ سکتا ہے ، لیکن مجھے یہ نہیں بتا سکتا کہ کیا کرنا ہے: مغربی بنگال وزیر اعلی ممتا بنرجی

مغربی بنگال کی وزیر اعلیٰ ممتا بنرجی: فائل فوٹو۔

خیال رہے کہ محرم کے جلوس کے دوران مورتی وسرجن پر ممتا بنرجی حکومت کے روک کو ختم کرتے ہوئے کلکتہ ہائی کورٹ نے 30ستمبر اور یکم اکتوبر کو بھی مورتی وسرجن کی اجازت دیتے ہوئے ریاستی حکومت کو ہدایت دی ہے کہ درگا پوجا کی مورتی بھسان اور تعزیہ کے روڈ کو پہلے سے متعین کیا جائے۔

عدالت نے درگا پوجا کی مورتی بھسان کا سلسلہ وجے دشمی 30ستمبر سے ہندو روایات کے مطابق جاری رہے گی ۔اس درمیان یکم اکتوبر کو محرم کا جلوس بھی نکلے گا ۔عدالت نے ریاستی حکومت سے کہا کہ اشتہارات کے ذریعہ عوام کو روڈ سے متعلق آگاہ کریں اور اس بات کو یقین بنائیں دونوں فرقہ کے درمیان امن و شانتی اور آہنگی کا ماحول قائم رہے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز