نیوز 18 کی خبر کا اثر، سکما شہید کے والد کے اکاؤنٹ میں آئے پیسے

چھتیس گڑھ کے سکما میں نکسلی حملے کے شہید کے خاندان کو آخر کار وہ پانچ لاکھ روپے مل گئے، جس کا بہار حکومت نے اعلان کیا تھا۔

May 10, 2017 06:48 PM IST | Updated on: May 10, 2017 06:48 PM IST

پٹنہ : چھتیس گڑھ کے سکما میں نکسلی حملے کے شہید کے خاندان کو آخر کار وہ پانچ لاکھ روپے مل گئے، جس کا بہار حکومت نے اعلان کیا تھا۔ یہ خاندان نوادہ کا رہنے والا ہے۔ دراصل میڈیا میں یہ خبر آئی تھی کہ شہید رنجیت کے خاندان کو جو پانچ لاکھ روپے کا چیک بہار حکومت کی طرف سے دیا گیا ہے ، وہ باؤنس ہو گیا۔ اس کے بعد حکومت کی خوب کرکری ہو رہی تھی۔

اب اس معاملے میں بینک کی جانب سے بیان آ یا ہے۔ اسٹیٹ بینک آف انڈیا (ایس بی آئی) کا کہنا ہے کہ یہ چیک باؤنس نہیں ہوا تھا، بلکہ کلیئرنس نہ ہونے کی وجہ سے یہ شہید کے کنبہ کے بینک اکاؤنٹ میں وقت پر جمع نہیں ہوپایا۔ ایسے میں وہ تکنیکی دقت دور کرکے شہید کے والد کے بینک اکاؤنٹ میں پانچ لاکھ روپیہ ٹرانسفر کر دیا گیا ہے۔

نیوز 18 کی خبر کا اثر، سکما شہید کے والد کے اکاؤنٹ میں آئے پیسے

وہیں شہید کے اہل خانہ کا کہنا ہے کہ جب وہ چیک لے کر ایچ ڈی ایف سی بینک پہنچے ، تو بینک حکام نے انہیں بتایا کہ یہ چیک باؤنس ہو گیا ہے۔ ایسے میں ان کے اکاؤنٹ میں پیسے نہیں ڈالے جا سکتے ہیں۔

قابل ذکر ہے کہ سکما حملے میں شیخ پورہ کے رہنے والے سی آر پی ایف جوان رنجیت کمار شہید ہو گئے تھے۔ وہ پھول چوڑھ گاؤں کے رہنے والے تھے۔ شہید کی بیوی سنیتا دیوی کو شہادت کے بعد بہار حکومت کی طرف سے ایچ ڈی ایف سی بینک کا پانچ لاکھ روپے کا چیک بھی دیا گیا تھا۔

Loading...

Loading...

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز