بہار : القاعدہ سے تعلق رکھنے کے الزام میں توصیف احمد خان سمیت دو کو پولیس نے کیا گرفتار

Sep 14, 2017 09:57 PM IST | Updated on: Sep 14, 2017 09:58 PM IST

پٹنہ / گیا: بھگوان بدھ کی نگری کہلانے والے بہار کے گیا ضلع سے پولیس نے دہشت گردانہ سرگرمیوں کے الزام میں دو مسلم نوجوانوں کو گرفتار کیا ہے ۔ توصیف احمد خان کے ساتھ ایک اور نوجوان کو گرفتار کیا گیا ہے۔ توصیف پر احمد آباد میں 9 سال قبل ہوئے بم دھماکہ کا الزام بھی ہے۔

ایڈیشنل ڈائریکٹر جنرل آف پولیس (ہیڈکوارٹر) ایس کے سنگھل نے دعوی کیا کہ گیا سے گرفتار کئے گئے توصیف کے تاراحمد آباد میں 2008 میں ہوئے بم دھماکوں سے جڑا ہے۔ احمدآبادبم دھماکوں کا وہ ملزم ہے۔ انہوں نے کہا کہ پولیس توصیف کے تمام ریکارڈ کھنگال رہی ہے۔

بہار : القاعدہ سے تعلق رکھنے کے الزام میں توصیف احمد خان سمیت دو کو پولیس نے کیا گرفتار

مسٹر سنگھل نے بتایا کہ گرفتاری کے فوری بعد ہی گجرات اے ٹی ایس کو اس کی اطلاع دے دی گئی ہے۔ بہار پولیس گجرات پولیس کے ساتھ رابطے میں ہے۔ انہوں نے کہا کہ گجرات اے ٹی ایس کی ٹیم توصیف سے پوچھ گچھ کرنے کے لئے گیا پہنچنے والی ہے۔ ایڈیشنل پولیس ڈائریکٹر جنرل نے بتایا کہ توصیف کے ساتھ ہی اس کے ساتھی مقامی نوجوان ثنا خان کو بھی گرفتار کیا گیا ہے۔

گرفتار توصیف گیا کے سول لائنس تھانہ حلقہ کے آشرم محلہ واقع ایک سائبر کیفے میں پچھلے کچھ دنوں سے آتا جاتا تھا اور اس نے متعدد ممبران پارلیمنٹ کو ای میل بھی کیا تھا۔ مسٹر سنگھل نے بتایا کہ ایسا خدشہ ظاہر کیا جا رہا ہے کہ گرفتار توصیف کا تعلق دہشت گرد تنظیم القاعدہ سے بھی ہو سکتا ہے۔ کچھ دن قبل ہی دہلی پولیس کی جانب سے القاعدہ کے مشتبہ دہشت گردوں کا ایک خاکہ جاری کیا گیا تھا جس سے توصیف کا ملاپ کیا جا رہا ہے۔

اس درمیان گیا سے موصولہ اطلاعات کے مطابق، توصیف اور ثنا کی گرفتاری کے بعد سے بہار اے ٹی ایس کی ٹیم مقامی پولیس کے تعاون سے ڈوبھي تھانہ علاقے کے ارد گرد کے گاؤں میں کل رات سےہی چھاپہ ماری کر رہی ہے۔ اس کے علاوہ پولیس اور بھی کئی ٹھکانوں پر چھاپہ ماری کی تیاری کر رہی ہے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز