بی جے پی میں شمولیت کی تیاریوں میں مصروف مکل رائے کو مرکزی وزارت داخلہ دے گی سیکورٹی

Oct 20, 2017 07:59 PM IST | Updated on: Oct 20, 2017 07:59 PM IST

کلکتہ: بی جے پی میں شمولیت کی تیاریوں میں مصروف ترنمو ل کانگریس کے سابق سینئر رہنما مکل رائے جنہوں نے ممتا بنرجی سے اختلافات کے بعد ریاستی حکومت کے ذریعہ مہیا سیکورٹی کو واپس کردیا تھا کواب مرکزی وزارت داخلہ سیکورٹی فراہم کرے گی۔ مکل رائے نے ریاستی حکومت کی سیکورٹی کو واپس کرتے ہوئے کہا تھا کہ انہیں اس لیے سیکورٹی دی گئی تھی کہ وہ ترنمول کانگریس کے سینئر لیڈر تھے اور راجیہ سبھا رکن ہیں ۔مگر چوں کہ وہ اب ریاست میں حکمراں جماعت ترنمول کانگریس کے کسی بھی عہدہ پر نہیں ہیں اس لیے وہ رضاکارانہ طور پر سیکورٹی چھوڑ رہے ہیں ۔تاہم چوں کہ مکل رائے اس وقت نہ کسی سیاسی جماعت میں ہیں اور نہ ہی راجیہ سبھا کے رکن ہیں ایسے میں مرکزی حکومت کے ذریعہ سیکورٹی فراہم کیے جانے پر سوالیہ نشان لگنا شروع ہوگیا ہے۔

مرکزی حکومت کے ذرائع کے مطابق وزارت داخلہ نہ مکل رائے کو دو طرح سے سیکورٹی فراہم کرنے کا فیصلہ کیا ہے ۔جب وہ دہلی میں ہوں گے انہیں ایکس سیکورٹی فراہم کی جائے گی اور جب وہ مغربی بنگال میں ہوں گے انہیں وائی سطح کی سیکورٹی فراہم کی جائے گی۔ذرائع کے مطابق ایکسگٹیگری سطح کی سیکورٹی کے تحت دو سے پانچ سیکورٹی گارڈ ہوں گے جو اسلحہ سے لیس ہوں گے ۔یہ اسی وقت فراہم کی جائے گی جب وہ دہلی میں ہوں گے ۔ وائی سطح کی سیکورٹی کے تحت دو مسلح کمانڈو اور 9مسلح پولس فراہم کی جائے گی ۔

بی جے پی میں شمولیت کی تیاریوں میں مصروف مکل رائے کو مرکزی وزارت داخلہ دے گی سیکورٹی

خیال رہے کہ حال ہی میں مکل رائے کو ترنمول کانگریس کے نائب صدر کے عہدہ سے ہٹا دیا گیا تھا اور اس کے علاوہ پارلیمنٹری کمیٹی برائے وزارت داخلہ سے ہٹا دیا گیا تھا۔

تاہم مرکزی حکومت کی جانب سے یہ نہیں کہا گیا ہے کہ مکل رائے کو سیکورٹی کیوں فراہم کی جارہی ہے۔ مکل رائے کو بی جے پی پارٹی میں لاکر ضلع سطح پر پارٹی کی تنظیمی طاقت کو مستحکم کرنا چاہتی ہے ۔خبروں کے مطابق 24اکتوبر کو مکل رائے باضابطہ بی جے پی میں شامل ہوجائیں گے اور اس کے بعد وہ ریاست بھر کا دورہ کریں گے ۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز