بہار : وزیر اعلی نتیش کے اعلان کے بعد بھی ایک سال سے اردو داروغہ تقرری کی فائل ٹھنڈے بستہ میں

Jul 18, 2017 09:57 PM IST | Updated on: Jul 18, 2017 09:58 PM IST

پٹنہ : بہار میں اردو داروغہ کی بحالی کا مطالبہ ایک مرتبہ پھر زور پکڑنے لگا ہے۔ وزیر اعلیٰ نتیش کمار نے ریاست کے سبھی تھانوں میں اردو داں داروغہ کی بحالی کا اعلان کیا تھا ، لیکن اس سلسلے میں کوئی کاروائی نہیں ہونے پر ملی و سماجی تنظیموں نے حکومت کو مورد الزام ٹھہریا ہے۔

اردو داروغہ کی بحالی کا معاملہ ایک طرح سے بہار میں دوسری سرکاری زبان کا عملی نفاذ ہے۔ وزیر اعلیٰ نتیش کمار کی جانب سے سبھی تھانوں میں اردوداں داروغہ کی بحالی کا اعلان محبان اردو کے لئے ان کے خوابوں کی تعبیرتھی ، لیکن اس سلسلہ میں اب تک پہل نہیں کی جانی حکومت کی کارکردگی پر سوالات کھڑا کرتا ہے۔

بہار : وزیر اعلی نتیش کے اعلان کے بعد بھی ایک سال سے اردو داروغہ تقرری کی فائل ٹھنڈے بستہ میں

امارت شرعیہ اورآل انڈیا یونائٹیڈ مسلم مورچہ نے صاف طور پر کہا کے اردو داروغہ کی بحالی کے معاملہ میں حکومت کی خاموشی ان کے ارادوں پرسوالات کھڑے کرتی ہے۔ صورتحال یہ ہے کہ اس تعلق سے بار بار مطالبہ کے بعد بھی حکومت کی جانب سے کوئی مثبت قدم نہیں اٹھایا جاسکا ہے۔ ادھر محکمہ اقلیتی فلاح نے دعویٰ کیاہے کہ اردو داروغہ کی بحالی کا مسئلہ جلد حل کیا جائےگا۔

قابل غور ہے کہ محکمہ داخلہ وزیر اعلیٰ نتیش کمار کے پاس ہے اور وزیر اعلیٰ نے ہی اس بات کا اعلان کیا ، پھر کیا سبب ہے کہ ایک سال قبل کیا گیا اعلان آج تک زمین پر نافذ نہیں ہوسکا۔ ریاست کے دیگر معاملات میں وزیراعلی اپنے رخ پر قائم رہتے ہیں ، تو پھر اردو داروغہ کی بحالی کے معاملہ میں ایسا کیوں نہیں ہے ۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز