وشوہندو پریشد کا مغربی بنگال میں ’’لوجہاد‘‘ کے خلاف مہم چلانے کا اعلان

آر ایس ایس کا الزام ہے کہ مسلم نوجوان ایک سازش کے تحت ہندو خواتین کے ساتھ عشق و محبت کے دام میں پھنسا کر شادی کرتے ہیں اور انہیں مسلمان بناتے ہیں ۔

Sep 05, 2018 11:01 AM IST | Updated on: Sep 05, 2018 11:53 AM IST

وشو ہندو پریشد نے کلکتہ اور مغربی بنگال کے کالجوں اور اسکولوں میں ’’لوجہاد‘‘ کے خلاف مہم چلانے کا اعلان کیا ہے۔  دوسری جانب حکمراں جماعت ترنمول کانگریس نے اس پر سخت رد عمل ظاہر کرتے ہوئے کہا ہے کہ ریاست میں نفرت انگیز مہم چلانے کی اجازت آر ایس ایس اور اس کی ذیلی تنظیموں کو کسی بھی صورت میں نہیں دی جائے گی۔

وشو ہندو پریشد کے میڈیا کنوینر سریش مکھرجی نے کہا کہ وشوہندو پریشد، یوتھ ونگ بجرنگ دل اور خواتین ونگ درگا واہنی’’لوجہاد‘‘ کے خلاف مہم چلائے گی اور سوشل میڈیا کے ذریعہ نوجوانوں تک پہنچنے کی کوشش کی جائے گی۔ خیال رہے کہ آر ایس ایس کا الزام ہے کہ مسلم نوجوان ایک سازش کے تحت ہندو خواتین کے ساتھ عشق و محبت کے دام میں پھنسا کر شادی کرتے ہیں اور انہیں مسلمان بناتے ہیں ۔

وشوہندو پریشد کا مغربی بنگال میں ’’لوجہاد‘‘ کے خلاف مہم چلانے کا اعلان

سریش مکھرجی نے نامہ نگاروں سے بات کرتے ہوئے کہا کہ ہم ریاست بھر میں لوجہاد کے خلاف مہم چلائیں گے

سریش مکھرجی نے نامہ نگاروں سے بات کرتے ہوئے کہا کہ ہم ریاست بھر میں لوجہاد کے خلاف مہم چلائیں گے اور نوجوانوں کو بتایا جائے گا کہ مسلم نوجوان ایک منصوبے کے تحت ہندو بہنوں کو اپنے عشق میں پھنساتے ہیں ۔ اس کیلئے ہم مختلف اسکول اور کالج میں جاکر پمفلٹ تقسیم کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ وہ محبت کی شادی کے خلاف نہیں ہیں مگر ہندو لڑکیوں کو نشانہ بنانے کے خلاف ہیں ۔اس لیے ہندو لڑکیوں اور ان کے والدین کو اس سے متعلق بتایا جائے گا۔

دوسری جانب اس معاملے میں بی جے پی لیڈروں نے کوئی تبصرہ کرنے سے انکار کردیا ہے۔ تاہم حکمراں جماعت ترنمول کانگریس ، اپوزیشن سی پی ایم اور کانگریس نے وشو ہندو پریشد کی سخت مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ یہ نوجوانوں کو مذہب کی بنیاد پر تقسیم کرنے کی کوشش کا حصہ ہے ۔

یہ بھی پڑھیں: مدھیہ پردیش : بی جے پی ممبر اسمبلی کا متنازع بیان ، لڑکیوں کی شادی میں تاخیر کی وجہ سے ہوتا ہے لو جہاد

ریاستی وزیر فرہاد حکیم نے کہا کہ گزشتہ چند سالوں میں بی جے پی، آر ایس ایس اور وشوہندو پریشد جیسی جماعتیں بنگال میں مذہب کی بنیاد پر لوگوں کو تقسیم کرنے کی کوشش کررہے ہیں ۔مگر یہاں ترنمول کانگریس کی حکومت ہے اس لیے سنگھ پریوار کو اس کا ایجنڈا کامیاب نہیں ہونے دیا جائے گا۔

یہ بھی پڑھیں: کیرالہ مبینہ لو جہاد معاملہ:ہادیہ کو راحت،سپریم کورٹ نے بحال کی شادی ،شوہر کے ساتھ رہ سکیں گی ہادیہ

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز