مغربی بنگال : عدالتوں میں جاری مقدمات کی وجہ سے پنچایت انتخابات کے بروقت انعقاد پرغیر یقینی صورت حال

عدالتوں میں جاری مقدمات کی وجہ سے مغربی بنگال میں پنچایت انتخابات کے انعقادپر غیر یقینی صورت حال پیدا ہوگئی ہے ۔

Apr 13, 2018 08:59 PM IST | Updated on: Apr 13, 2018 08:59 PM IST

کلکتہ: عدالتوں میں جاری مقدمات کی وجہ سے مغربی بنگال میں پنچایت انتخابات کے انعقادپر غیر یقینی صورت حال پیدا ہوگئی ہے ۔ ممتا بنرجی کی قیادت والی ترنمول کانگریس نے آج ڈویژن بنچ میں جسٹس سبرتا تعلقدار کی قیادت والی یک رکنی بنچ جنہوں نے 16اپریل تک پنچایت انتخابات کے عمل پر روک لگادی ہے کے فیصلے کو چیلنج کیا تھا ۔مگر ڈویژن بنچ نے ترنمول کانگریس کی درخواست کو رد کردیا اور سماعت کی تاریخ 16اپریل مقرر کی ہے ۔

بنگال بی جے پی یونٹ نے ہائی کورٹ میں عرضی دائر کرتے ہوئے درخواست دی ہے کہ اس کیس میں انہیں بھی پارٹی بنائی جائے۔بنگال میں پنچایت انتخابات یکم مئی ، 3مئی اور 5مئی کو ہونے والے ہیں ۔کل کلکتہ ہائی کورٹ کی یک رکنی بنچ نے اپوزیشن جماعتیں بایاں محاذ، کانگریس اور بی جے پی کی درخواست پر سماعت کرتے ہوئے پنچایت انتخابات کے عمل کو 16اپریل تک روک لگادی ہے ۔اس کے علاوہ جج نے ریاستی الیکشن کمیشن نے پرچہ نامزدگی کی شرح اور رد کیے جانے سے متعلق تفصیلی رپورٹ طلب کی ہے ۔

مغربی بنگال : عدالتوں میں جاری مقدمات کی وجہ سے پنچایت انتخابات کے بروقت انعقاد پرغیر یقینی صورت حال

علامتی تصویر

جسٹس سبرتا تعلقدار نے ریاستی الیکشن کمیشن سے پرچہ نامزدگی کے دوران ہونے والے تشدد کے واقعات اور پھر پرچہ نامزدگی کے وقت میں اضافہ سے متعلق نوٹی فیکیشن واپس لیے جانے سے متعلق رپورٹ طلب کی ہے ۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز