دار جلنگ میں گورکھا جن مکتی مورچہ کے صدر کے گھر پر چھاپہ ، بڑے پیمانے پر ہتھیار برآمد

Jun 15, 2017 07:07 PM IST | Updated on: Jun 15, 2017 07:08 PM IST

کلکتہ: دارجلنگ میں گورکھا جن مکتی مورچہ کے صدر بمل گورنگ کی رہائش گاہ پر پولس کے چھاپہ کے دوران بڑے پیمانے پر نقد اور ہتھیار برآمد کیے گئے ہیں ۔اس دوران پولس پر بتھراؤں کرنے والے مورچہ کے ورکروں کو بھی گرفتار کیا گیا ہے ۔اس کے بعد دارجلنگ میں حالات خراب ہوگئے ہیں ۔ پولس ذرائع کے مطابق مورچہ کے صدر کی رہائش گاہ پٹلی واس پر چھاپہ کے دوران بڑے پیمانے تیر، دھنش اور تیز دار ہتھیار اور پٹاخے برآمد کیے گئے ہیں۔ایڈیشنل ڈائریکٹر سدھی ناتھ گپتا ، آئی جی جاوید شمیم اور ایس پی اکھلیش چترویدی کی قیادت والی ٹیم گورنگ کی رہاش گاہ کو توڑکر گھر اور دفتر میں داخل ہوئی اور یہ ہتھیار برآمد کیا ۔چھاپہ ڈیڑھ گھنٹے تک چلی۔

چھاپہ کے دوران مورچہ کے حامیوں کی ایک بڑی تعداد نے سیکوڑٹی فورسیس کو گھیر لیا اور ان پر پتھراؤ شروع کردیا۔پولس نے بھیڑ کو منتشر کرنے کیلئے لاٹھی چارج اور آنسو گیس چھوڑا ۔ پولس نے کہا ہے کہ حالات کنٹرول میں ہے۔گزشتہ دو دن بعد آج بینک اور اے ٹی ایم کھل گئے ہیں ۔کالمپونگ میں پولس چوکی کو آگ لگادینے کی خبر ہے ۔گورکھا جن مکتی مورچہ کی ناڑی مورچہ کی لیڈر کرونا گورنگ کو بھی گرفتار کیا گیا ہے ۔

دار جلنگ میں گورکھا جن مکتی مورچہ کے صدر کے گھر پر چھاپہ ، بڑے پیمانے پر ہتھیار برآمد

پولس کی کاررائی کے بعد مورچہ نے غیر معینہ اسٹرائیک کا اعلان کیا ہے ۔پولس پر پتھراؤکے بعد کارروائی کی وجہ سے دارجلنگ میں حالات کشیدہ ہوگئے ہیں ۔گورکھا یوا مورچہ نے آج نے دارجلنگ شہر میں ریلی کا اعلان کیا تھا تاہم کئی ورکروں کو پولس نے گرفتار کیا ہے ۔کالمپونگ میں بھی ریلی کا انعقاد کیا گیا ہے ۔

دارجلنگ کے ایس پی نے کہا کہ کل شام ہمیں اطلاع ملی تھی کہ بڑے پیمانے پر ہتھیار ضبط کیے جارہے ہیں تاکہ ریلی کے دوران پولس پر استعمال کیا جاسکے ۔انہوں نے کہا کہ گرچہ یہ روایتی قسم کے ہتھیار ہیں مگر بڑے پیمانے پر جمع کرنے کا مقصد کیا ہوسکتا ہے؟ دوسرے پٹاخے بھی بڑی تعداد میں تھے ۔جس وقت کارروائی کی جارہی تھی اس وقت مورچہ کے صدر بمل گورنگ گھر میں موجود نہیں تھے۔

گورکھا سنٹرل کمیٹی نے پولس کارروائی کے بعد غیر معینہ اسٹرائیک کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ ہم لوگ قبائلی ہیں اس لیے ہم لوگ اپنا روایتی ہتھیار رکھتے ہیں ۔پولس ان روایتی سامان کو ہتھیار کے طور پر پیش کررہی ہے۔ہم گورکھا لینڈ کا اسی لیے مطالبہ کررہے ہیں کہ تاکہ ہم اپنے کلچر اور روایات کی حفاظت کرسکے ۔ سینئر پولس آفیسر نے کہا کہ گورنگ اور دیگر لیڈروں کی رہائش گاہوں خفیہ رپورٹ کی بنیادپر چھاپے مارے گئے تھے۔چھاپہ ابھی جاری ہے ۔کئی مورچہ حامیوں کو گرفتار کیا گیا ہے ۔

مورچہ کے سیکریٹری جنرل روشن گیری نے کہا کہ ریاستی حکومت شکاری والی سیاست کررہی ہے ۔پولس اور ریاستی حکومت ہمیں غیر معینہ ہڑتال پر جانے کیلئے اکسا رہی ہے ۔ہم نے اس صورت حال سے مرکزی حکومت کو آگاہ کردیا ہے ۔آج سے ہم نے پہاڑ پر غیر معینہ مدت کیلئے ہڑتال پر جانے کا اعلان کیا ہے۔

پولس نے یہ کارروائی مورچہ کے ہڑتال کے چوتھے دن کی ہے ۔کل ہی بمل گورنگ نے کہا تھا کہ ہمارا احتجاج اس وقت تک جاری رہے گا جب تک ہم گورکھا لینڈ کو حاصل نہیں کرلیتے ہیں ۔انہوں نے سیاحوں سے کہا تھا کہ وہ دارجلنگ آنے سے گریز کریں ۔ گورکھا جن مکتی مورچہ اور پہاڑ کی دیگر 6جماعتیں گورکھا لینڈ کی حمایت میں سوموار سے غیر معینہ ہڑتال پر ہے ۔

DARJEELING, JUNE 15 (UNI):- West Bengal police recovered huge cache of arms and ammunitions including bows and arrows at Gorkha Janamukti Morcha (GJM) chief Bimal Gurung's residence, in Darjeeling on Thursday. UNI PHOTO-14U

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز