قطر سے کئے گئے مطالبات پر غور نہیں: مصر

Jul 06, 2017 03:51 PM IST | Updated on: Jul 06, 2017 03:51 PM IST

قاہرہ۔  مصر نے کہا ہے کہ اس کے اور تین دیگر خلیجی ممالک کی جانب سے قطر سے کئے گئے مطالبات پر کوئی غور نہیں کیا جاسکتا ہے۔ مصر کے وزیر خارجہ سمیع شکری نے ایک ٹیلی ویژن سے کہا ’شروعات سے ہی یہ معاملہ سمجھوتہ مذاکرات کیلئے نہیں تھا، اس میں درمیان کا کوئی راستہ نہیں ہے۔ سعودی عرب، متحدہ عرب امارات، بحرین اور مصر نے قطر سے دہشت گردوں کا ساتھ دینے کے الزام میں اپنے سفارتی اور تجارتی تعلقات توڑ لئے تھے۔

ان چار ممالک نے قطر کے سامنے 13 مطالبات رکھے تھے۔ ان مطالبات میں اخوان المسلمین کی حمایت ختم کرنا، الجزیرہ کی نشریات بند کرنا، ایران کے ساتھ سفارتی روابط محدود کرنا اور  ترکی کا فوجی اڈہ بند کرنا شامل ہے۔ قطر نے حالانکہ کہا تھا کہ چاروں ممالک کے مطالبات غیرحقیقی اور کارروائی کے قابل نہیں ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اس کا دہشت گردی سے کوئی لینا دینا نہیں ہے، یہ اظہار رائے کی آزادی کو ختم کرنے کی بات ہے۔

قطر سے کئے گئے مطالبات پر غور نہیں: مصر

قطر کے وزیر خارجہ الثانی: فائل فوٹو

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز