قطر کے بڑے اداروں اور کمپنیوں میں عید کی تعطیلات منسوخ ، سفارتی اور معاشی بحران کا نتیجہ

Jun 23, 2017 12:17 PM IST | Updated on: Jun 23, 2017 12:17 PM IST

خلیجی ممالک کی طرف سے سفارتی اور معاشی بائیکاٹ کے نتیجے میں پیدا ہونے والے بحران سے نمٹنے کے لیے قطری حکومت نےعید الفطر کے موقع پر مقامی اور غیرملکی ملازمین کی تعطیلات منسوخ کر دی ہیں۔ خبر رساں ادارے’رائٹرز‘ کے مطابق ’قطر پٹرولیم‘ سمیت ملک کے کئی بڑےاداروں اور کمپنیوں میں کام کرنے والے مقامی اور غیرملکی ملازمین کی عید پر چھٹی نہیں دی گئی۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ نے میڈیا رپورٹس کے حوالے سے خبر دی ہے کہ قطر کے بڑے اداروں کی طرف سے بہت محدود تعداد میں ملازمین کو اس بار چھٹی دی گئی ہے۔ عید کی تعطیلات منسوخ کیے جانے کا جواز موجودہ بحران بتایا جاتا ہے جس کے تحت قطر کو معاشی مشکلات کا سامناکرنا پڑا ہے۔ اس بحران پرقابو پانے کے لیے قطری حکومت نے اہم اداروں کے ملازمین کو عید پر رخصت کی اجازت نہیں دی۔

قطر کے بڑے اداروں اور کمپنیوں میں عید کی تعطیلات منسوخ ، سفارتی اور معاشی بحران کا نتیجہ

قطر کے بڑےاداروں اور کمپنیوں میں کام کرنے والے غیرملکی شہریوں کو یہ توقع نہیں تھی کہ حکومت انہیں گھروں کو لوٹنے کی اجازت نہیں دے گی۔ عید سے چند روز قبل بڑی کمپنیوں کی طرف سے ملازمین کو یہ بُری خبرسنائی گئی کہ انہیں اس بار عید پر رخصت نہیں دی جاسکتی اور وہ سفر کےموقع پر دور دراز کا سفر نہیں کر سکتے۔

’رائٹرز‘ نے بعض غیرملکی شہریوں کےحوالے سے بتایا ہے کہ دوحہ میں ’حمد میڈیکل کمپلیکس‘ اور ’قطر پٹرولیم‘ سمیت کئی دوسرے اداروں کے ملازمین کی عید کے ایام میں چھٹی منسوخ کی گئی ہے۔ غیرملکی ملازمین کا کہنا ہے کہ دونوں سرکاری اداروں کے مدارالمہام نے تعطیلات کی منسوخی کی وجہ ظاہر نہیں کی تاہم چھٹیوں کی منسوخی کا سلسلہ اس وقت سے جاری ہے جب قطر اورخلیجی ممالک کے درمیان بحران پیدا ہوا ہے۔

 

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز