عرب ممالک کا دباؤ ہماری ریاست کی خود مختاری وسلامتی پر حملہ: شیخ تمیم

نیویارک۔ قطر کے امیر شیخ تمیم بن حمد الثانی نے کہا ہے کہ عرب ملکوں کا ایک گروپ ایک خود مختار ریاست کو غیر مستحکم کرنے کی کوشش کر رہا ہے۔

Sep 20, 2017 02:00 PM IST | Updated on: Sep 20, 2017 02:00 PM IST

نیویارک۔ قطر کے امیر شیخ تمیم بن حمد الثانی نے کہا ہے کہ عرب ملکوں کا ایک گروپ ایک خود مختار ریاست کو غیر مستحکم کرنے کی کوشش کر رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ دوحہ کی ناکہ بندی یکسر غیر قانونی ہے۔ اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے امیر قطر نے کہا کہ قطر کی ناکہ بندی کرنے والے عرب ممالک دوسروں کے اندرونی معاملات میں مداخلت کرتے ہیں اور ان تمام ممالک پر الزام لگاتے ہیں جنہوں نے دہشت گردی کی کھل کر مخالفت کی ہے۔ قطر کے امیر نے کہا کہ ایسا کر کے وہ دہشت گردی کے خلاف جنگ کو نقصان پہنچا رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ مشرق وسطیٰ میں امریکہ کا سب سے بڑا فوجی اڈہ قطر میں ہے۔

شیخ تمیم نے کہا کہ عرب ممالک نے ہم پر دباو ڈالنے اور اپنی شرطیں تھوپنے کی کوشش کی جسے ہم نے سختی کے ساتھ مسترد کر دیا۔ امیر قطر نے کہا کہ ہم پر دباؤ ڈالنے والے ممالک کا یہ اقدام بلاشبہ ہماری ریاست کی خود مختاری وسلامتی پر حملے کے ساتھ ساتھ انسانی حقوق کی بھی  خلاف ورزی ہے۔ شیخ تمیم نے خلیج کے بدترین سفارتی بحران کے خاتمے کے لیے غیر مشروط بات چیت پر زور دیا۔ انہوں نے کہا کہ وہ تعلقات منقطع کرنے والے ممالک سے باہمی احترام پر مبنی غیر مشروط مذاکرات کرنے کو تیار ہیں۔

عرب ممالک کا دباؤ ہماری ریاست کی خود مختاری وسلامتی پر حملہ: شیخ تمیم

قطر کے امیر شیخ تمیم بن حمد الثانی نیویارک میں اقوام متحدہ کے صدر دفتر میں عالمی ادارہ کی جنرل اسمبلی سے خطاب کرتے ہوئے: رائٹرز۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز