pakistan releases indian citizen hamid nihal ansari returns home to an emotional reunion– News18 Urdu

عشق میں بغیرویزہ کے پاکستان پہنچ گئے تھے حامد انصاری، 6 سال بعد ایسے ہوئی ہندوستان واپسی

حامد انصاری 2012 میں اپنی خاتون دوست سے ملاقات کے لئے پاکستان گئے تھے۔ خاتون سے ان کی دوستی سوشل میڈیا کے ذریعہ ہوئی تھی۔ 

Dec 18, 2018 09:56 PM IST | Updated on: Dec 18, 2018 11:26 PM IST

جاسوسی اوربغیردستاویزکے پاکستان سفرکے جرم میں جیل میں قید ہندوستانی شہری حامد نہال انصاری کو منگل کو رہاکردیا گیا۔ پاکستان میں راوی ندی سے پارکرانے کے بعد انہیں ایک جیل وین کے ذریعہ واگھا - اٹاری سرحد پرلایا گیا ہے، جس کے بعد وہ وطن لوٹے۔ اس درمیان حامد نہال کے اہل خانہ امرتسرپہنچے، جہاں پران کے اہل خانہ پہلے سے ہی موجود تھے۔

اس سے قبل پاکستان۔ انڈیا فورم فار پیس اینڈ ڈیموکریسی (پی آی پی ایف پی ڈی) کے جنرل سکرٹری جتن دیسائی نے نامہ نگاروں کویہاں بتایا کہ ہاں یہ ایک بڑی خبرہے۔ حامد نہال انصاری جیل سے آزاد ہوچکے ہیں اورمنگل کے دن دوپہرکو انہیں واگہہ بارڈرپرہندوستان کے حوالے کیا جائے گا۔

عشق میں بغیرویزہ کے پاکستان پہنچ گئے تھے حامد انصاری، 6 سال بعد ایسے ہوئی ہندوستان واپسی

حامد نہال انصاری: اے این آئی

نہال انصاری کے کنبہ کےلوگ بشمول ان کے والد نہال اورماں فوزیہ اورانڈیا۔ پاکستان فرینڈشپ کے سماجی کارکنان ، افسران اورسیاسی شخصیت اس موقع پران کا سرحد پر استقبال کیا۔  اس دوران ان کی ماں اورحامد نہال انصاری جذباتی ہوگئے۔  اس سے قبل حامد انصاری کی ماں نے کہا کہ  'وہ نیک ارادوں کے ساتھ وہاں گیا تھا، پھروہ اچانک سے لا پتہ ہوگیا اوربعد میں اسے پکڑا گیا اوراس پرکیس چلا۔ اسے ویزا کے بغیر نہیں جانا چاہئے تھا۔ اس کی رہائی انسانیت کی جیت ہے'۔

وزارت خارجہ کے ترجمان رويش کمارنے یہاں ایک پریس کانفرنس میں یہ اطلاع دی۔ رویش کمارنے کہا ’’ہمیں پاکستان سے یہ اطلاع ملی ہے کہ ہند ستانی شہری حامد نہال انصاری کو رہا کیا جائے گا‘‘۔ انہوں نے کہا کہ یہ خاص طور پر نہال کے اہل خانہ کے لئے بہت بڑی راحت کی بات ہے کیونکہ تقریبا چھ سال سے اس کا (نہال کو) ’بن واس‘ختم ہو رہا ہے۔ ممبئی بی جے پی کے سماجی کارکن اورسابق ممبر اسمبلی کرشن ہیگڑے گزشتہ کچھ برسوں سے اس معاملے میں ان کے کنبے کی مدد کررہے تھے۔ انہو ں نے کہا کہ وہ لوگ نئی دہلی میں واقع پاکستانی سفارت خانہ گئے تھے اور ان کی محفوظ وطن واپسی کے لئے رسمی خانہ پری کی تھی۔

کیا ہے پورا معاملہ؟

حامد نہال 2012 میں اپنی خاتون دوست سے ملنے پاکستان گئے تھے۔ خاتون سے ان کی دوستی سوشل میڈیا کے ذریعہ ہوئی تھی۔ بتایا جاتا ہے کہ وہ افغانستان کے راستے پاکستان میں گھسے۔ کوہٹ ضلع میں پاکستان خفیہ ایجنسیوں اورمقامی پولیس کے ذریعہ انہیں گرفتارکرلیا گیا، جس کے بعد حامد نہال انصاری غائب ہوگئے۔ 

Loading...