ایران میں حکومت مخالف احتجاج کے بعد اب حمایت میں نکالی گئیں ریلیاں

دبئی۔ ایران میں مہنگائی اور مبینہ بدعنوانی کے سلسلے میں کئی شہروں میں حکومت مخالف مظاہروں کے بعد آج حکومت کی حمایت میں ریلیاں نکالی گئیں۔

Dec 30, 2017 09:49 PM IST | Updated on: Dec 30, 2017 09:49 PM IST

دبئی۔ ایران میں مہنگائی اور مبینہ بدعنوانی کے سلسلے میں کئی شہروں میں حکومت مخالف مظاہروں کے بعد آج حکومت کی حمایت میں ریلیاں نکالی گئیں۔ ایران کے سرکاری میڈیا کے مطابق دارالحکومت تہران کے علاوہ مشهد میں مظاہرین سپریم لیڈر آیت اللہ خمینی کی حمایت میں بینر لے کر سڑکوں پر نکلے۔ یہاں 28 نومبر کو، سینکڑوں افراد نے مہنگائی کے خلاف احتجاج کیا اور حکومت مخالف نعرے لگائے ۔

ایران کے نائب صدر اسحاق جہانگیری نے خدشہ ظاہر کیا ہے کہ صدر حسن روحانی کے بنیاد پرست اور قدامت پسند مخالفین نے احتجاج کروایا اور مظاہرین پر کنٹرول کھو دیا۔ سرکاری ذرائع ابلاغ کے مطابق، انہوں نے کہا، ’’جو لوگ واقعہ کے پیچھے ہیں ان کو نقصان اٹھانا پڑے گا ۔ پولیس نے مغربی شہر کرمان شاہ میں حکومت مخالف مظاہرین کو منتشر کیا تھا۔ تہران اور کئی دیگر شہروں میں ہونے والے مظاہرے سال 2009 میں وسیع اصلاحات  کے بعد سے اب تک کے سب سے بڑے مظاہرے ہیں۔ مشھد کے ایک عدالتی افسر کے مطابق، 28 نومبر کو پولیس نے مظاہرین کو گرفتار کیا تھا۔

ایران میں حکومت مخالف احتجاج کے بعد اب حمایت میں نکالی گئیں ریلیاں

ایران کے صدر حسن روحانی: فائل فوٹو۔

امریکہ نے ایران میں مظاہرین کو گرفتار کرنے کی سخت مذمت کی تھی۔ امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ نے ٹویٹ کیا، ’’ایرانی حکومت کو لوگوں کے حقوق کا احترام کرنا چاہیے۔ اس میں اظہار کا حق بھی شامل ہے۔ پوری دنیا کی نظریں ایران پر ہیں‘‘۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز