تمام تر رکاوٹوں کے باوجود ایک ہزار سے زائد قطری عازمین حج زمینی راستے سے سعودی عرب پہنچے

Aug 26, 2017 01:54 PM IST | Updated on: Aug 26, 2017 01:54 PM IST

ریاض : قطری حکومت کی طرف سے رکاوٹیں کھڑی کرنے کے باوجود قطر سے تعلق رکھنے والے 1024 شہری فریضہ حج کی ادائیگی کے لیے خشکی کے راستے سعودی پہنچ چکے ہیں۔ یہ اعداد وشمار جمعرات تک کے ہیں۔ العربیہ داٹ نیٹ کی خبر کے مطابق جمعرات کو 650 عازمین حج سلویٰ گذرگاہ عبور کرکے سعودی عرب پہنچے تھے۔

خیال رہے کہ قطری حکومت نے عازمین حج کو حمد بین الاقوامی ہوائی اڈے سے جدہ میں شاہ عبدالعزیز بین الاقوامی ہوائی اڈے تک سعودی عرب کی خصوصی حج پروازوں کے ذریعے قطری حجاج کو بھیجنے سے انکار کردیا تھا تاہم زمینی راستے سے قطری عازمین حج بدستور مشاعر مقدسہ پہنچ رہے ہیں۔سعودی فرمانروا شاہ سلمان بن عبدالعزیز آل سعود نے 17 اگست کو قطر کے ان تمام عازمین حج کو زمینی راستے سے مملکت میں داخل ہونے کی اجازت دی تھی جنہیں آن لائن حج کے اجازت نامے نہیں مل سکے تھے۔

تمام تر رکاوٹوں کے باوجود ایک ہزار سے زائد قطری عازمین حج زمینی راستے سے سعودی عرب پہنچے

شاہ سلمان کے حکم پر سلویٰ گذرگاہ کو قطری عازمین حج کے لیے کھول دیا گیا تھا۔ شاہ سلمان کی طرف سے یہ اقدام قطر کے شاہی خاندان کی اہم شخصیت الشیخ عبداللہ بن علی بن عبداللہ بن قاسم آل ثانی کی ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان سے جدہ میں ہونے والی ملاقات کے بعد کیا تھا۔ شہزادہ محمد نے قطری عازمین حج کو ہر ممکن سہولیات کی فراہمی اور انہیں قطر سے سعودی عرب لانے کے اقدامات کے لیے شاہ سلمان سے سفارش کی تھی۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز