سعودی عرب میں سنیما گھروں کی واپسی: ہالی ووڈ کے معروف اداکار جان ٹراولٹا پہنچے ریاض

سٹرڈے نائٹ فیور اور گریز میں اپنے رول کے لئے مشہور ہالی ووڈ سپر اسٹار جان ٹراولٹا کی ریاض آمد پر ان کا پرجوش خیرمقدم کیا گیا۔

Dec 16, 2017 07:21 PM IST | Updated on: Dec 16, 2017 07:22 PM IST

ریاض۔ رواں ہفتہ سعودی عرب نے ملک میں سنیما گھروں پر عائد 35 سالہ پابندی کو ختم کرنے کا اعلان کرتے ہوئے کہا ہے کہ مارچ کے مہینہ میں یہاں پہلے فلم تھئیٹر کا افتتاح کیا جائے گا۔ سعودی عرب کے اس اعلان کے بعد عالمی اداکاروں اور فنکاروں کی مملکت کے سنیما کے تئیں دلچسپی میں مسلسل اضافہ ہو رہا ہے۔ اسی ضمن میں ہالی ووڈ کے معروف اداکار جان ٹراولٹا جمعہ کے روز مملکت کی راجدھانی ریاض پہنچے۔ سٹرڈے نائٹ فیور اور گریز میں اپنے رول کے لئے مشہور ہالی ووڈ سپر اسٹار جان ٹراولٹا کی ریاض آمد پر ان کا پرجوش خیرمقدم کیا گیا۔ اپنے کیریر اور ہالی ووڈ کے بارے میں تبادلہ خیال کے لئے وہ پہلی بار مملکت پہنچے ہیں۔

سعودی میڈیا کے مطابق، ریاض میں واقع اپیکس کنونشن سینٹر میں 63 سالہ اس اداکار نے اپنی شہرت کے سفر کے بارے میں عوام کے سوالوں کا جواب دیا۔ تقریب کے منتظمین نے بتایا کہ دو ہزار لوگوں کی گنجائش والا سینٹر مکمل طور پر بھرا ہوا تھا۔ اگلے سال سے سنیما گھروں کے کھلنے کے معاملہ پر تبصرہ کرتے ہوئے اداکار نے کہا کہ سعودی حکومت کا یہ ایک خوش آئند فیصلہ ہے۔

سعودی عرب میں سنیما گھروں کی واپسی: ہالی ووڈ کے معروف اداکار جان ٹراولٹا پہنچے ریاض

ریاض میں واقع اپیکس کنونشن سینٹر میں پندرہ دسمبر دو ہزار سترہ کو ہالی ووڈ اداکار جان ٹراولٹا کی پرفارمنس کو دیکھتے سعودی شہری۔ تصویر، رائٹرز۔

ٹراولٹا کچھ دنوں تک ریاض میں قیام کریں گے۔ اس دوران وہ شہر کے سیاحتی، ثقافتی اور تفریحی مقامات کا دورہ کریں گے۔

آپ کو بتا دیں کہ  سعودی وزارت ثقافت و اطلاعات کی جانب سے جاری ہونے والے بیان میں سعودی وزیر برائے ثقافت و اطلاعات عواد بن صالح العوّاد  نے کہا ہے کہ ’امید ہے کہ آئندہ سال مارچ 2018 میں پہلا سینیما گھر کھل جائے گا۔‘ اس فیصلے کو سعودی ولی عہد محمد بن سلمان کی جانب سے ملک میں شہریوں کے لیے تفریح اور ملکی معیشت کی بہتری کے لیے فراہم کیے جانے والے مواقعوں کی سلسلے میں شروع کی گئی مہم کا ایک حصہ قرار دیا جا رہا ہے۔

Loading...

Loading...

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز