سیکس کرنے کے علاوہ سب کچھ بھول جاتا ہے اس بیماری کا مریض

آئیے جانتے ہیں اس بیماری کا مریض سب کچھ بھول جاتا ہے لیکن سیکس کرنا کیوں نہیں بھولتا

Jan 10, 2019 09:51 PM IST | Updated on: Jan 10, 2019 11:26 PM IST

الزائمر ایک ایسی بیماری ہے جس میں مریض دھیرے -دھیرے ہر چیز بھولنے لگتا ہے۔ لوگوں کے نام، ان کی پہچان اور اپنے روٹین کی کئی باتیں بھی اسے یاد نہیں رہتی ہیں ۔ اس بیماری کی وجہ سے مریض کو تمام پریشانیوں کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔ سب کچھ بھول جانے کے بعد اس کے مریض ایک چیز نہیں بھولتے اور وہ ہے سیکس۔ آئیے جانتے ہیں اس بیماری کا مریض سب کچھ بھول جاتا ہے لیکن سیکس کرنا کیوں نہیں بھولتا۔

نیو انگلینڈ جرنل آف میڈیسن میں شائع ایک سروے میں اس بات کی تصدیق کی گئی ہے۔ اس  میں 57 سے لے کر 85 سال کے 3 ہزار سے زیادہ لوگوں کی عام زندگی کو دیکھ کر یہ سروے کیا گیا۔ اس میں پایا گیا ہےکہ الزائمر یا کسی بھی ذہنی مرض میں مبتلا شخص کو سیکس کے دوران کئی طرح کی پریشانیاں آتی ہیں، جیسے اکسائٹمنٹ کی کمی، آرگینزم میں پریشانی وغیرہ۔

سیکس کرنے کے علاوہ سب کچھ بھول جاتا ہے اس بیماری کا مریض

علامتی تصویر

اس کے بعد بھی انہیں سیکس کرنے کی تکنیک پوری طرح سے یاد رہتی ہے۔ مریض کسی بھی عمر تک اسے یاد رکھنےمیں کامیاب ہے۔ تمام پریشانیوں کے بعد بھی سیکس کرنے کی ضرورت  محسوس کر سکتا ہے۔ اس کی وجہ ہے کہ سیکس اپنے آپ میں ایک فطری چیز ہے۔ کسی بھی شخص کے لئے جنسی تعلق بنانا اس کے وجود کے لئے بھی بہت ضروری ہے۔

Loading...

اسے سیکھنے کی ضرورت نہیں ہوتی، اسی طرح اسے بھولنے کی بھی وجہ نہیں ہے۔ جسم کی دوسری اہم چیزیں جیسے سانس لینا، کھانا پینا ان ہی میں سے ایک سیکس بھی شامل ہے۔

 

Loading...