پابندی ہٹائے جانے پر عراقی وزیر اعظم کا ٹرمپ کا شکریہ

Mar 21, 2017 02:50 PM IST | Updated on: Mar 21, 2017 02:53 PM IST

واشنگٹن۔  عراق کے وزیر اعظم حیدر العبادی نے عراق پر سے سفر ی پابندی ہٹائے جانے کے بعد امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ کا شکر ادا کیا اور کہا کہ وہ اسلامک اسٹیٹ کے دہشت گردوں کے خلاف جنگ میں مزید تعاون کا مطالبہ کرتے ہیں۔ مسٹر ٹرمپ کے گذشتہ 20 جنوری کو حلف لینے کے بعد دونوں ممالک کے رہنماؤں کی وائٹ ہاؤس میں ملاقات ہوئی تھی ۔ مسٹر عبادی اسلامک اسٹیٹ کے خلاف جنگ میں زیادہ فعال کردار ادا کر رہے ہیں۔ اسلامک اسٹیٹ نے عراق کے ایک سوات کےبڑے علاقے پر قبضہ کر لیا ہے۔ مسٹر عبادی نے  ٹرمپ سے پابندی ہٹانے جانے کی اپیل کی تھی جس کے بعد مسٹر ٹرمپ نے اپنے ملک میں داخل ہونے پر روک لگائے جانے سے متعلق عارضی روک ہٹا لی۔

 عبادی نے ٹرمپ سے کہا، ’’میں عراق سے پابندی ہٹانے جانے کے لئے صدر کے حکم کے لئے آپ کا شکریہ ادا کرتا ہوں ...‘‘۔ عراق کی درخواست کا مثبت جواب ملنا اشارہ کرتا ہے کہ عراق اور امریکہ کے درمیان تعلقات بہتر ہیں۔ مسٹر ٹرمپ نے مسٹر عبادی سے کہا کہ وہ جانتے ہیں کہ اسلامک اسٹیٹ سے لڑنا کتنا مشکل ہے۔ انہوں نے کہا، ’’یہ آسان کام نہیں ہے۔ یہ بہت ہی مشکل کام ہے۔ آپ کےفوجی کافی مشکل جنگ لڑ رہے ہیں۔ ہماری طرف سے آپ کو مکمل تعاون دیا جائے گا‘‘۔

پابندی ہٹائے جانے پر عراقی وزیر اعظم کا ٹرمپ کا شکریہ

عراقی وزیر اعظم حیدر العبادی امریکی صدر سے ملاقات کرتے ہوئے: رائٹرز

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز