یہودیوں کے خلاف تعصب کا الزام، امریکہ اور اسرائیل یونیسکو کی رکنیت سے دستبردار

Oct 13, 2017 06:05 PM IST | Updated on: Oct 13, 2017 06:05 PM IST

واشنگٹن۔ امریکہ اور اسرائیل نے اقوام متحدہ کی تعلیمی، سائنسی اور ثقافتی تنظیم (یونیسکو) پر یہودیوں کیخلاف تعصب برتنے کا الزام عائد کرتے ہوئے تنظیم کی رکنیت سے دستبرداری کا اعلان کردیا۔ امریکہ کا کہنا ہے کہ یونیسکو اسرائیل کے معاملے پر جانبداری کا مظاہرہ کررہا ہے ۔ امریکی محکمہ خارجہ کی ترجمان ہیتھر نوریٹ نے اپنے بیان میں کہا کہ جلد ایک مبصر مشن تشکیل دیا جائے گا جو یونیسکو میں امریکہ کی نمائندگی کرے گا۔

ہیتھر نوریٹ نے کہا کہ امریکہ نے یونیسکو کی سبکدوش ہونے والی ڈائریکٹر جنرل ایرینا بوکووا کو اپنے فیصلے سے آگاہ کردیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ امریکا نے یہ فیصلہ بہت غور و فکر کے بعد کیا ہے۔ یونیسکو میں بنیادی اصلاحات کی ضرورت ہے جب کہ اسرائیل کے خلاف متعصبانہ رویہ بھی ختم کرنا ہوگا۔

یہودیوں کے خلاف تعصب کا الزام، امریکہ اور اسرائیل یونیسکو کی رکنیت سے دستبردار

اسرائیل کے وزیر اعظم بنجامن نیتن یاہو: فائل فوٹو، رائٹرز۔

وہیں، سکریٹری جنرل اقوام متحدہ انٹونیو گوئٹرس نے کہا کہ امریکہ کیساتھ مل کر کام کرتے رہیں گے۔ انہوں نے دستبرداری کے امریکی فیصلے پر افسوس کا اظہار کیا۔ یہ بات ان کے ترجمان فرحان حق نے کہی۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز