اسرائیل کی غزہ کی سرحد پر سرنگ کو تباہ کردینے کی کارروائی میں 7 فلسطینی شہید

غزہ / یروشلم۔ اسرائیل نے غزہ کی پٹی کی سرحد کے قریب کھودے جا رہے ایک سرنگ کو آج تباہ کر دیا جس میں 7 فلسطینی شہید اور 9 دیگر زخمی ہو گئے۔

Oct 31, 2017 12:33 PM IST | Updated on: Oct 31, 2017 12:34 PM IST

غزہ / یروشلم۔ اسرائیل نے غزہ کی پٹی کی سرحد کے قریب کھودے جا رہے ایک سرنگ کو آج تباہ کر دیا جس میں 7 فلسطینی شہید اور 9 دیگر زخمی ہو گئے۔ غزہ میں وزارت صحت کے ترجمان اشرف القدرہ نے یہ اطلاع دی۔ انہوں نے بتایا کہ زخمیوں کو قریبی الاقصیٰ اسپتال میں داخل کرایا گیا ہے۔ حماس نے اس حملے کو فلسطینی اتحاد کی کوششوں کو نقصان پہنچانے والا ایک بے کارکی کارروائی قرار دیا ہے۔

اس ماہ کے آغاز میں فلسطینی صدر محمود عباس کی جانب سے صلح کے معاہدہ کی پہل کی گئی تھی۔ اگرچہ نہ تو اسرائیل اور نہ ہی حماس اس معاملہ کو آگے بڑھانے کا خواہشمند ہے۔ اسرائیل کا کہنا ہے کہ اس نے اپنے علاقے میں سرنگ پر کارروائی کی۔ اسرائیلی فوجی ترجمان لیفٹیننٹ-کرنل جوناتھن كانركس نے کہا-’ای ڈی ایف (اسرائیل ڈیفنس فورس) کا حالات کو آگے بڑھانے کا ارادہ نہیں ہے بلکہ یہ مختلف حالتوں کے لئے تیار ہے‘‘۔ انہوں نے کہا، ’’سرحد پر غزہ شہر کے خان یونس علاقے سے اس سرنگ کو کھودا جا رہا تھا، جہاں اسے اڑا دیا گیا‘‘۔

اسرائیل کی غزہ کی سرحد پر سرنگ کو تباہ کردینے کی کارروائی میں 7 فلسطینی شہید

اسرائیلی فوجی غزہ کی پٹی اور اسرائیل کے درمیان سرحد پر گشت کرتے ہوئے: فائل فوٹو۔

اسلامی عسکریت پسند گروپ کے ایک ذرائع نے کہا کہ تنظیم کے وسطی غزہ میں مسلح یونٹ کے سربراہ اپنے ایک سینئر ساتھی اور ایک اور مسلح شخص کے ساتھ مارے گئے۔گروپ نے انتقامی کارروائی کا انتباہ دیتے ہوئے کہا-’’جوابی کارروائی کے لئے تمام متبادل کھلے ہیں‘‘۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز