جسٹس جاوید اقبال نیب کے چیئرمین مقرر

Oct 09, 2017 05:16 PM IST | Updated on: Oct 09, 2017 05:16 PM IST

اسلام آباد۔ حکومت ِپاکستان نے سپریم کورٹ کے سابق جسٹس (ریٹائرڈ) جاوید اقبال کو قومی احتساب بیورو (نیب) کا چیئرمین مقرر کیا ہے۔ پاکستان کے انگریزی نیوز پیپر ڈان نے آج یہ اطلاع دیتے ہوئے بتایا کہ حکومت نے سابق سبکدوش جسٹس جاوید اقبال کی تقرری کے سلسلے میں نوٹیفکیشن بھی جاری کر دیا ہے۔ تقرری کا نوٹیفکیشن قانون و انصاف کی وزارت کی جانب سے جاری کیا گیا ہے۔ نوٹی فیکیشن کے مطابق وہ 10 اکتوبر کو عہدہ سنبھال لیں گے اور چار برس تک نیب کے چیئرمین رہیں گے۔

جسٹس جاوید اقبال 2011 تک سپریم کورٹ کے جج تھے۔ انھوں نے پاکستان میں لاپتہ افراد کے معاملے پر بننے والے جوڈیشل کمیشن کے چیئرمین کے طور بھی کام کیا تھا۔ اس سے قبل گذشتہ اتوار کو قومی اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر خورشید شاہ نے کہا کہ مسٹرجاوید اقبال کو نیب کا چیئرمین مقرر کرنے کے سلسلے میں اتفاق رائے سے فیصلہ کیا گیا ہے۔ مسٹر شاہ نے نامہ نگاروں سے بات چیت میں کہا کہ جماعت اسلامی پاکستان، پاکستان تحریک انصاف اور متحدہ قومی موومنٹ کی جانب سے تجویز کردہ نام بھی اچھے تھے لیکن غور و خوض کے بعد جسٹس جاوید اقبال کے نام پر اتفاق ہوا اور انہیں چیئرمین مقرر کرنے کا فیصلہ کیا گیا۔

جسٹس جاوید اقبال نیب کے چیئرمین مقرر

جسٹس جاوید اقبال: فائل فوٹو۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز