نشیلی چائے پلا کر لڑکی نے نوجوان کے ساتھ بنائے جسمانی تعلقات ، پھر کیا ایسا کام کہ جان کر اڑجائیں گے ہوش– News18 Urdu

نشیلی چائے پلا کر لڑکی نے نوجوان کے ساتھ بنائے جسمانی تعلقات ، پھر کیا ایسا کام کہ جان کر اڑجائیں گے ہوش

راجستھان کے سیکر میں ایک لڑکی کے ذریعہ آبروریزی کا مقدمہ درج کرانے پر ایک نوجوان نے زہر کھا کر خودکشی کرنے کی کوشش کی ۔

May 30, 2019 09:09 PM IST | Updated on: May 30, 2019 09:20 PM IST

راجستھان کے سیکر میں ایک لڑکی کے ذریعہ آبروریزی کا مقدمہ درج کرانے پر ایک نوجوان نے زہر کھا کر خودکشی کرنے کی کوشش کی ۔ نوجوان کے بے ہوش ہونے پر راہگیروں نے اس کو ایس کے اسپتال پہنچایا ۔ جہاں اس کا علاج چل رہا ہے ۔ نوجوان خودکشی نوٹ لکھ کر اور زہریلی دوا پی کر الزام لگانے والی لڑکی کے گھر کے پاس پہنچا تھا ، لیکن یہاں پہنچتے ہی وہ بے ہوش ہوکر گرگیا ۔

اطلاعات کے مطابق نوجوان کا نام پرکاش ہے ۔ وہ انجینئرنگ کا طالب علم ہے اور رادھا کشن پورا میں کرائے کا مکان لے کر رہتا ہے ۔ پرکاش کا کہنا ہے کہ جہاں وہ کوچنگ میں پڑھنے کیلئے جاتا تھا ، وہاں کام کرنے الی ایک لڑکی نے اس کا فون نمبر مانگا اور اس سے بات کرنے لگی ۔ اس کے بعد وہ جالندھر پنجاب میں انجینئرنگ کالج چلا گیا ۔ یہاں بھی لڑکی اس کے پاس پہنچ گئی ۔

نشیلی چائے پلا کر لڑکی نے نوجوان کے ساتھ بنائے جسمانی تعلقات ، پھر کیا ایسا کام کہ جان کر اڑجائیں گے ہوش

علامتی تصویر

Loading...

الزام ہے کہ یہاں لڑکی نے چائے میں نشہ کی دوا پلا کر اس کے ساتھ جسمانی تعلقات قائم کئے ۔ اس کے بعد شادی کا دباو بنانے لگی ۔ بعد میں لڑکی اور اس کے اہل خانہ نے نوجوان سے 20 لاکھ روپے کا مطالبہ شروع کردیا ۔ منع کرنے پر لڑکی نے اس کو پھنسانے کیلئے آبروریزی کا جھوٹا مقدمہ درج کرادیا ۔

پرکاش کا کہنا ہے کہ مستقبل خراب ہونے کے ڈر سے پہلے اس نے خودکشی نوٹ لکھا ۔ اس کے بعد بازار سے جراثیم کش دوا خریدی اور اس کو پی کر لڑکی کے گھر چلا گیا ۔ نزدیک پہنچنے کے بعد اس کو ہوش نہیں رہا اور اس کی آنکھ اسپتال میں جاکر کھلی ۔ ادھر پولیس نے لڑکی پاس سے خودکشی نوٹ برآمد کرلیا ہے اور اس کی بنیاد پر معاملہ کی جانچ کی جارہی ہے۔

کچھ دنوں پہلے لڑکی نے پولیس کو عرضی دی تھی ، جس میں لڑکی نے کہا تھا کہ لڑکے نے شادی کے نام پر اس کی چار سالوں تک آبروریزی کی ۔ الزام ہے کہ جب وہ لڑکے کے گھر گئی تو اس کے اہل خانہ نے اس کے ساتھ مار پیٹ کی ۔ معاملہ ادیوگ نگر میں درج ہونے کے بعد جانچ سی او سٹی کو سونپ دی گئی تھی ۔

Loading...