ترکی میں ایک ہزار سے زیادہ افراد کو حراست میں لیا گیا

انقرہ۔ ترکی میں گزشتہ برس ہوئے تختہ پلٹ کی ناکام کوشش کے سلسلے میں ملک بھر سے حالیہ دنوں میں 1098 مشتبہ افراد کو حراست میں لیا گیا ہے۔

Aug 01, 2017 12:53 PM IST | Updated on: Aug 01, 2017 12:53 PM IST

انقرہ۔ ترکی میں گزشتہ برس ہوئے تختہ پلٹ کی ناکام کوشش کے سلسلے میں ملک بھر سے حالیہ دنوں میں 1098 مشتبہ افراد کو حراست میں لیا گیا ہے۔ ترکی کی وزارت دفاع کی جانب سے کل جاری ایک بیان کےمطابق حال ہی میں گرفتار کئے گئے ان لوگوں میں سے 831 لوگوں کا تعلق امریکہ میں مقیم مذہبی رہنما فتح اللہ گولن سے ہے جن پر تختہ پلٹنے کی سازش کا الزام ہے۔ حالانکہ مسٹر گولن نے اس سے انکار کیا ہے۔

بیان میں کہا گیا ہے کہ حراست میں لئے گئے افراد میں سے 213 کا تعلق دہشت گرد تنظیم کردش ورکرس پارٹی (پی کے کے) سے ہے۔ اس کے علاوہ 46 کا تعلق اسلامک اسٹیٹ سے ہے اور آٹھ کا تعلق بایاں محاذ سے ہے۔ واضح رہے کہ گزشتہ برس 15 جولائی کو ترکی میں تختہ پلٹ کی ناکام کوشش کے بعد اب تک 50 ہزار افراد کو حراست میں لیا گیا ہے اور ڈیڑھ لاکھ ملازمین کو معطل کیا گیا ہے۔

ترکی میں ایک ہزار سے زیادہ افراد کو حراست میں لیا گیا

علامتی تصویر

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز