لیبا : معمر قذافی کے بیٹے سیف الاسلام کو چھ سال کی قید کے بعد رہا کردیا گیا

Jun 11, 2017 04:03 PM IST | Updated on: Jun 11, 2017 04:03 PM IST

تبروک: لیبیا کے سابق رہنما معمر قذافی کے بیٹے سیف الاسلام قذافی کو چھ سال تک تحویل میں رکھنے کے بعد رہا کر دیا گیا ہے۔ سیف الاسلام کی رہائی ملک کے مشرقی شہر تبروک میں قائم منتخب حکومت کی طرف سے انہیں دی جانے والی عام معافی کے نتیجے میں ہوئی۔ ابوبکر الصدیق بٹالین نامی ملیشیا نے ایک بیان میں بتایا کہ سیف الاسلام کو جمعہ کو دیر گئے رہا کردیا گیا۔سیف الاسلام کی حفاظت کی ذمہ داری اسی ملیشیا کے حوالے تھے۔

خیال رہے کہ 44 سالہ سیف الاسلام قذافی کو نومبر 2011ء میں اس وقت زنتان سے گرفتار کیا گیا تھا جب جنگجووں کی طرف سے طرابلس پر قبضہ کیے جانے کے بعد وہ نائیجر فرار ہونے کی کوشش کر رہے تھے۔قذافی کے آٹھ بچوں میں سے سب سے زیادہ نمایاں سیف الاسلام ہی تھے اور انھیں قذافی کی حکومت کے عہدیداروں کے مقدمات سننے والی طرابلس کی ایک عدالت نے 2015 میں سزائے موت سنائی تھی۔یہ سزا انہیں ملک میں 2011ء میں ان کے والد کی حکومت کے خلاف چلنے والی تحریک کے دوران ہونے والی ہلاکتوں کے الزامات کے تحت سنائی گئی تھی۔

لیبا : معمر قذافی کے بیٹے سیف الاسلام کو چھ سال کی قید کے بعد رہا کردیا گیا

ابوبکر الصدیق بریگیڈ کے مطابق سیف الاسلام رہائی کے بعد نامعلوم مقام پر منتقل ہو گئے۔ تاہم ابھی تک یہ واضح نہیں ہے کہ تبروک میں قائم منتخب حکومت کی جانب سے انہیں یہ معافی کب دی گئی تھی۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز