امریکہ میں سال 2050 تک مسلمانوں کی آبادی ہو جائے گی دوگنی: پیو ریسرچ سینٹر

Jan 10, 2017 12:16 PM IST | Updated on: Jan 10, 2017 02:33 PM IST

نئی دہلی۔ امریکہ میں فی الحال مسلمانوں کی آبادی تقریباً تینتیس لاکھ ہے یعنی وہاں کی بتیس اعشاریہ دو کروڑ کی کل آبادی میں مسلمان تقریبا ایک فیصد ہیں۔ جبکہ دو ہزار پچاس تک امریکہ میں مسلمانوں کی آبادی دوگنا زیادہ ہو جائے گی۔

پیو ریسرچ سینٹر کے ایک تخمینہ کے مطابق، دو ہزار پچاس تک امریکہ میں مقیم مسلمانوں کی تعداد موجودہ تعداد  سے دوگنی ہو جائے گی۔ فی الحال امریکہ میں مسلمان یہودیوں سے کم ہیں۔ لیکن ان کی تعداد ہندووں سے زیادہ ہے۔ امریکہ میں یہودی ستاون لاکھ کے قریب ہیں جبکہ ہندووں کی تعداد تقریباً اکیس لاکھ ہے۔

امریکہ میں سال 2050 تک مسلمانوں کی آبادی ہو جائے گی دوگنی: پیو ریسرچ سینٹر

فائل فوٹو

سینٹر کے ایک تخمینہ کے مطابق، مسلمان دو ہزار چالیس میں امریکہ میں عیسائیوں کے بعد سب سے بڑا مذہبی گروہ ہوں گے۔ جس کا مطلب یہ ہوا کہ وہ پچیس سال میں یہودیوں کو اپنے پیچھے چھوڑ دیں گے۔ امریکہ میں نیو جرسی میں سب سے زیادہ مسلمان رہتے ہیں۔ خیال رہے کہ امریکہ میں مذہب اسلام قبول کرنے والوں کی تعداد دن بہ دن بڑھتی جا رہی ہے ۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز