اعظم خان جیت رہے ہیں رامپورکی تاریخی پارلیمانی سیٹ!۔– News18 Urdu

اعظم خان جیت رہے ہیں رامپورکی تاریخی پارلیمانی سیٹ!۔

 لوک سبھا الیکشن میں ووٹنگ کا دور ختم ہونے کے بعد جو ایگزٹ پول سامنے آرہے ہیں، ان کے مطابق اترپردیش کی تاریخی اوردلچسپ ہوچکی رامپورکی سیٹ میں زبردست مقابلہ ہے۔

May 21, 2019 12:04 AM IST | Updated on: May 21, 2019 12:04 AM IST

رامپورلوک سبھا سیٹ واضح طورپراعظم خان کے اثروالی سیٹ ہے۔ اس باریہاں مقابلہ اس لئے دلچسپ ہے کیونکہ سماجوادی پارٹی کے اعظم خان اورسماجوادی پارٹی چھوڑکربی جے پی میں آئیں جیا پردہ کے درمیان سیدھا مقابلہ ہے۔ دونوں زبانی جنگ کرچکے ہیں۔ ووٹنگ ختم ہونے کے بعد نیوز 18 - اسپاس کے ایگزٹ پول مبنی اندازے کے مطابق اس سیٹ پرسخت مقابلہ ہے، یہ سیٹ پھنستی ہوئی نظرآرہی ہے۔ فی الحال اس سیٹ سے کسی کے جیتنے کے واضح آثارنہیں نظرآرہے ہیں۔

رامپورایسی لوک سبھا سیٹ ہے، جہاں سے الیکشن جیت کرمولانا ابوالکلام آزاد ملک کے پہلے وزیرتعلیم بنے تھے۔ بات 1952 کی ہے، لیکن اس کے بعد صرف 1977 میں ایمرجنسی کے بعد ہوئے الیکشن کوچھوڑ دیا جائے تو کانگریس مسلسل 1989 تک جیت حاصل کرتی رہی۔  1977 اور1991 میں دوبارراجندرکمارشرما نے یہاں سے جیت حاصل کی تھی۔

اعظم خان جیت رہے ہیں رامپورکی تاریخی پارلیمانی سیٹ!۔

رامپورکی سیٹ پراعظم خان کو اس بارشکست دینا آسان نہیں۔

Loading...

راجندرکمارشرما  دونوں بارالگ الگ پارٹیوں کے ٹکٹ پرجیتے تھے۔ 1977 میں وہ جہاں جنتا پارٹی کے ٹکٹ پرمیدان میں تھے تو1991 میں بی جے پی کے ٹکٹ پر۔ بعد میں 1996 میں کانگریس کی بیگم نوربانو یہاں سے الیکشن جیتیں تو 1998 میں مختارعباس نقوی نے بی جے پی کے ٹکٹ پراس سیٹ سے جیت حاصل کرلی۔

سال 1999میں پھر بیگم نوربانو نے جیت حاصل کی۔ اوریہ آخری بار تھا جب اس سیٹ پر کانگریس کو جیت ملی۔ اس کے بعد سماجوادی پارٹی کی امیدواراوراداکارہ جیا پردہ 2004 اور2009 کے لوک سبھا الیکشن میں جیت کرپارلیمنٹ پہنچیں۔ 2014 میں بی جے پی کے ڈاکٹر نیپال سنگھ مودی لہرمیں اس سیٹ سے جیتے تھے۔ مولانا ابوالکلام آزاد 1952 کے لوک سبھا میں رامپورسیٹ سے جیتے تھے۔

کیسی ہوگی اعظم خان اورجیا پردہ کی لڑائی

اس باربی جے پی کے ٹکٹ پرالیکشن لڑنے پہنچی جیا پردہ یہاں سے دو بارلوک سبھا کا الیکشن  جیت چکے ہیں۔ تب فرق یہ تھا کہ مسلم اکثریتی اس علاقے میں جیا پردہ کو ملائم سنگھ یادو کی وجہ سے یکمشت اقلیتی ووٹوں کا فائدہ ہوجاتا تھا۔ اس بارکی کہانی گزشتہ بار سے مختلف ہے۔ رامپوراسمبلی سیٹ سے 9 بارسے مسلسل اسمبلی کا الیکشن جیت رہے اعظم خان جیا پردہ کے سامنے ہیں۔

اعظم خان کی رامپورعلاقے میں زبردست پکڑ ہے۔ وقت گزرنے کے ساتھ انہوں نے خود کو رامپورکی پہچان کے طورپرقائم کیاہے۔ ایسے میں رامپورمیں جیا پردہ کے لئے اس بارکا چیلنج پہلے کی طرح آسان نہیں رہنے والا ہے۔ جیا پردہ کے لئے ایک اورپریشانی کانگریس کی طرف سے سنجے کپورکا کھڑا ہونا بھی ہے۔ سنجے کپورمقامی لیڈرہیں، اس حالت میں سہ رخی مقابلہ ہونے کے پورے آثارہیں، لیکن اس لڑائی میں سب سے اوپراعظم خان نظرآرہے ہیں۔

 

 

Loading...