نتیش کا پی ایم مودی پر نشانہ ، کہا : صرف گھوم گھوم کر تقریریں کیں ، وعدہ ایک بھی نہیں نبھایا– News18 Urdu

نتیش کا پی ایم مودی پر نشانہ ، کہا : صرف گھوم گھوم کر تقریریں کیں ، وعدہ ایک بھی نہیں نبھایا

وزیر اعلی نتیش کمار نے آج کہاکہ وزیراعظم نریندر مودی نے اپنے دو برسوں کی میعادکار کے دوران اب تک صرف گھوم گھوم کر تقریریں کی ہیں لیکن لوک سبھا الیکشن کے دوران کیا گیا کوئی بھی وعدہ پورا نہیں کیا

Jun 18, 2016 08:45 PM IST | Updated on: Jun 18, 2016 08:45 PM IST

مرزا پور : جنتا دل (یو) کے صدر اور بہار کے وزیر اعلی نتیش کمار نے آج کہاکہ وزیراعظم نریندر مودی نے اپنے دو برسوں کی میعادکار کے دوران اب تک صرف گھوم گھوم کر تقریریں کی ہیں لیکن لوک سبھا الیکشن کے دوران کیا گیا کوئی بھی وعدہ پورا نہیں کیا۔ مسٹر کمار نے یہاں ایک عوامی جلسہ سے خطاب کے دوران کہاکہ بی جے پی ووٹوں کیلئے کسی بھی حد تک جا سکتی ہے۔ حب الوطنی کا دم بھرنے والی بی جے پی ووٹ حاصل کرنے کیلئے فرقہ پرستی کا سہارا لیتی ہے۔

وزیر اعظم نریندر مودی کو نشانہ بناتے ہوئے بہار کے وزیر اعلی نے کہاکہ مسٹر مودی نے اپنے دو برسوں کے دوران اب تک صرف گھوم گھوم کر تقریریں کی ہیں لیکن لوک سبھا الیکشن کے دوران کیا گیا کوئی بھی وعدہ پورا نہیں کیا۔ وہیں پارٹی اپنے دو برسوں کے کاموں کا جشن منانے میں مصروف ہے۔

نتیش کا پی ایم مودی پر نشانہ ، کہا : صرف گھوم گھوم کر تقریریں کیں ، وعدہ ایک بھی نہیں نبھایا

انہوں نے کہاکہ اترپردیش میں جب جب الیکشن آتا ہے فرقہ پرستی کی سیاست شروع کردی جاتی ہے۔ کیرانہ کا واقعہ اس کی ایک مثال ہے۔ کیرانہ سے نقل مکانی کی وجہ غریبی اور بے روزگاری ہے مگر بی جے پی اسے فرقہ پرستی کا رنگ دینے پر مُصر ہے۔

مسٹر کمار نے کہاکہ بی جے پی سردار ولبھ بھائی پٹیل کو اپنا رول ماڈل مانتی ہے جبکہ پیروی راشٹریہ سوئم سیوک سنگھ (آر ایس ایس) کا کرتی ہے۔ بی جے پی کو یہ قطعی نہیں بھولنا چاہئے کہ مسٹر پٹیل نے ہی آر ایس ایس پر پابندی لگائی تھی۔ مسٹر کمار نے سماج وادی پارٹی (ایس پی) کو کنبہ پرور پارٹی قرار دیتے ہوئے کہاکہ ایس پی ایمانداری سے کام نہیں کر رہی ہے۔ ریاست میں قانون و انتظام کی حالت انتہائی خستہ ہے۔ بدعنوانی شباب پر ہے۔ عوام اس حکومت سے پیچھا چھڑانے کی فراق میں ہیں۔

Loading...

عوامی جلسہ میں جمع ہونے والی بھیڑ سے پرجوش بہار کے وزیر اعلی نے کہاکہ یہ کارکنوں کی کانفرنس ہے۔ آئندہ دنوں میں وہ انتخابی ریلی کریں گے۔ انہوں نے اپنا اگلا مقام الہ آباد کو بتایا۔ انہوں نے کہا کہ کارکنوں کے اجلاس کی بھیڑ سے کہیں زیادہ انتخابی ریلی میں لوگ ہوں گے۔ یہ ریلی ’پریورتن ریلی‘ ہوگی۔

Loading...