complaint in election commission against sadhvi pragya thakur for her comments on hemant karkare ns– News18 Urdu

سادھوی پرگیہ ٹھاکرکےبیان پرالیکشن کمیشن نے شروع کی جانچ، آئی پی ایس ایسوسی نےکہا- 'یہ شہیدوں کی توہین'۔

پرگیہ ٹھاکرنے ایک بیان میں کہا کہ 26/11 حملے میں شہید ہوئے اے ٹی ایس چیف ہیمنت کرکرے کوان کے کاموں کی سزاملی۔ ان کے کرم ٹھیک نہیں تھے، اس لئے انہیں سنیاسیوں کی بد دعا لگی تھی۔

Apr 19, 2019 07:48 PM IST | Updated on: Apr 19, 2019 07:48 PM IST

مدھیہ پردیش کی بھوپال لوک سبھا سیٹ سے بی جے پی امیدوارسادھوی پرگیہ ٹھاکر اے ٹی ایس چیف ہیمنت کرکرے کی شہادت پربیان دے کرمصیبت میں پھنس گئی ہیں۔ پرگیہ ٹھاکرکے اس بیان کے خلاف الیکشن کمیشن میں شکایت کی گئی ہے۔ مدھیہ پردیش کے چیف الیکشن کمشنرنے کہا کہ 26/11 کے شہیدوں کے خلاف بیان دینے کولےکربھوپال لوک سبھا سیٹ کی امیدوارسادھوی پرگیہ ٹھاکرکے خلاف شکایت ملی ہے۔ فی الحال معاملے کی جانچ کی جارہی ہے۔

آئی پی ایس ایسوسی ایشن نےشہید ہوئے اے ٹی ایس چیف ہیمنت کرکرے پرسادھوی پرگیہ کے تبصرہ کی سخت مذمت کی۔ ایسوسی ایشن نے ٹوئٹ کیا 'اشوک چکراعزاز سے سرفراز کئےگئےآنجہانی شہید آئی پی ایس ہیمنت کرکرے نے دہشت گردوں سے لڑتے ہوئے قربانی دی۔ ہم سبھی نے ایک امیدوارکے ذریعہ دیئےگئے قابل توہین اورقابل اعتراض بیان کی مذمت کرتے ہیں۔ ایسا بیان شہید ہیمنت کرکرے کی توہین ہے۔ ہم نےمطالبہ کیا کہ سبھی شہیدوں کی قربانیوں کا احترام کیا جائے'۔

سادھوی پرگیہ ٹھاکرکےبیان پرالیکشن کمیشن نے شروع کی جانچ، آئی پی ایس ایسوسی نےکہا- 'یہ شہیدوں کی توہین'۔

سادھوی پرگیہ سنگھ ٹھاکر

واضح رہےکہ ایک بیان میں سادھوی پرگیہ نے کہا کہ 26/11 حملے میں شہید ہوئے اے ٹی ایس چیف ہیمنت کرکرے کوان کےکرموں کی سزا ملی۔ ان کے کرم ٹھیک نہیں تھے، اس لئے انہیں سنیاسیوں کی بد دعا لگی تھی۔ سادھوی پرگیہ نے کہا 'جس دن میں جیل گئی تھی، اس کے 45 دن کےاندرہی دہشت گردوں نےاس کا خاتمہ کردیا'۔ بھوپال میں میڈیا سے بات کرتے ہوئےسادھوی پرگیہ نےکہا 'اے ٹی ایس مجھے 10 اکتوبر2008 کوسورت سے ممبئی لے کرگئی تھی۔ وہاں 13 دن تک یرغمال (بندھک) بناکررکھا گیا۔ مرد اے ٹی ایس ملازمین نے اس دوران مجھے خوب ستایا'۔

انہوں نے مزید کہا 'سابق اے ٹی ایس چیف ہیمنت کرکرے کو سنیاسیوں کی بد دعا (شراپ) لگی اورمیرے جیل جانےکےتقریباً 45 دن بعد ہی وہ 26/11 کےدہشت گردانہ حملے کا شکارہوگئے۔ سال 2008 میں ہوئے 26/11  ممبئی حملے میں مارے گئے 166 لوگوں کے علاوہ دہشت گردوں کی گولیوں سے ممبئی اے ٹی ایس چیف ہیمنت کرکرے، اے سی پی اشوک کامٹےاورانکاونٹرماہروجے سالسکرسمیت 17 پولیس اہلکاربھی شہید ہوگئے تھے۔