عاشق جوڑے نے کھایا زہر تو ایک سرکاری اسپتال میں ہوئی شادی– News18 Urdu

عاشق جوڑے نے کھایا زہر تو ایک سرکاری اسپتال میں ہوئی شادی

Jul 30, 2018 04:27 PM IST | Updated on: Jul 30, 2018 04:34 PM IST

ہریانہ کے حصار کے ایک سرکاری اسپتال میں ایک انوکھی شادی دیکھنے کو ملی جہاں ایک عاشق جوڑا شادی کے مقدس بندھن میں بندھ گیا۔ دراصل، گرومکھ اور کسم ایک دوسرے سے پیار کرتے ہیں۔ اہل خانہ کے ڈر سے دونوں نے زہریلی چیز پی لی۔ زہر پینے کے بعد گرومکھ نے اپنے بڑی بھائی کو فون کیا اور بتایا کہ ہم دونوں نے زہر کھا لیا ہے۔ اطلاع ملتے ہی گرومکھ کا کنبہ ان کے پاس پہنچا اور دونوں کو ایک نجی اسپتال میں بھرتی کرایا۔

اسپتال میں جب دونوں کے اہل خانہ آمنے سامنے آئے تو ان کے بیچ پھر سے کہاسنی ہو گئی۔ اسپتال کے ایک گارڈ نے دونوں فریقوں کو خاموش کرایا اور انہیں اپنے بچوں کی صورت حال پر غور وخوض کرنے کو کہا۔ اس کے بعد دونوں کنبوں نے غوروخوض کر کے گرومکھ اور کسم کی شادی کرانے کا فیصلہ کیا۔

عاشق جوڑے نے کھایا زہر تو ایک سرکاری اسپتال میں ہوئی شادی

اسپتال میں شادی

Loading...

اس کے بعد دونوں کے اہل خانہ نے اسپتال میں ہی دونوں کی شادی کروا دی۔ وہیں ڈاکٹروں کی مانیں تو لڑکے کی حالت معمول پر ہے جبکہ لڑکی کی حالت تشویش ناک بنی ہوئی ہے۔ دونوں کالج میں پڑھنے کے دوران ہی ایک دوسرے سے ملے تھے لیکن دونوں کے گھر والے ان کی شادی کے خلاف تھے۔

Loading...