indian army will be sent from here the war from pakistan weapons ns– News18 Urdu

پاکستان سے جنگ ہونے پریہاں سے بھیجا جائےگا ہندوستانی فوجیوں کوہتھیاروں کا ذخیرہ

ایک ایمیونیشن ڈمپ ہندوستان اورپاکستان کی سرحد پربنایا جائے گا جبکہ تین ہندوستان اورچین کی سرحد پربنایا جائےگا۔

Apr 25, 2019 10:21 PM IST | Updated on: Apr 25, 2019 10:21 PM IST

پلوامہ حملےکےبعد جس طرح سے ہندوستانی فضائیہ نےپاکستان کے بالا کوٹ میں گھس کر جیش محمد کے دہشت گردانہ کیمپوں کوتباہ کیا ہے، اس کےبعد سے پاکستان اورہندوستان کے درمیان رشتےکافی کشیدہ چل رہے ہیں۔ پاکستان اورچین سےبڑھتی کشیدگی کودیکھتے ہوئے سرحد پرہندوستانی فوج کومضبوط کرنےکا کام تیزکردیا گیا ہے۔ اسی ضمن میں اب فوج کو گولہ بارود رکھنےکےلئے پاکستان اورچین کی سرحد پر4 سرنگ بنائےجانےکوہری جھنڈی دے دی گئی ہے۔

ہندوستانی فوج اوراین ایچ پی سی کے ساتھ ہوئےمعاہدے کے مطابق ان چاروں سرنگ کودو سال کےاندرپورا کرلیاجائے گا۔ یہ پہلا پروجیکٹ ہوگا، جسےاین ایچ پی سی پائلٹ پروجیکٹ کے طورپرکریں گی۔ بتایا جاتا ہے کہ ایک ایمیونیشن ڈمپ ہندوستان اورپاکستان کی سرحد پربنائی جائے گی جبکہ تین ہندوستان اورایک چین کی سرحد پربنایا جائے گا۔ بتایا جاتا ہے کہ اس پروجیکٹ میں 15 کروڑروپئے کی لاگت آئے گی۔

پاکستان سے جنگ ہونے پریہاں سے بھیجا جائےگا ہندوستانی فوجیوں کوہتھیاروں کا ذخیرہ

پاکستان سے جنگ ہوئی تویہاں سے ہندوستانی فوج کو ہتھیاروں کا ذخیرہ بھیجا جائےگا۔

Loading...

فوج اس ٹنل کے لئے کافی وقت سے کوشش کررہی تھی۔ این ایچ پی سی کوپہاڑوں میں سرنگ بنانے میں مہارت حاصل ہے۔ بتایا جارہا ہے کہ چاروں ٹنل میں 175 سے 200 میٹرک ٹن گولہ بارود رکھنے کی صلاحیت ہوگی۔ ان سرنگ کواس طرح سے تیارکیا جائے گا کہ دشمن کے کسی بھی حملے کا اثریہاں پرنہ ہو۔ پہاڑوں کے اندرگولہ بارود رہنے کا سب سے بڑا فائدہ یہ ہوگا کہ ہرموسم میں ہندوستانی فوج کے پاس آسانی سے انہیں پہنچایا جاسکے گا۔

Loading...