مدھیہ پردیش کے شروعاتی رجحانات میں بی جے پی اور کانگریس کے مابین زبردست ٹکر

ڈاک ووٹوں اور پہلے راونڈ کی گنتی کے بعد 230میں سے تقریباََ 215سیٹوں کے رجحانات سامنے آئے ہیں۔

Dec 11, 2018 10:27 AM IST | Updated on: Dec 11, 2018 10:28 AM IST
مدھیہ پردیش کے شروعاتی رجحانات میں بی جے پی اور کانگریس کے مابین زبردست ٹکر

مدھیہ پردیش میں بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) اور کانگریس کے مابین کانٹے کی ٹکر

 مدھیہ پردیش میں ووٹوں کی گنتی شروع ہونے کے دو گھنٹے بعد شروعاتی رجحانات میں حکمراں جماعت بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) اور کانگریس کے مابین کانٹے کی ٹکرنظر آرہی ہے۔ ڈاک ووٹوں اور پہلے راونڈ کی گنتی کے بعد 230میں سے تقریباََ 215سیٹوں کے رجحانات سامنے آئے ہیں۔ ان میں سے 101پر بی جے پی، 100پر کانگریس اور باقی تقریباََ ایک درجن پر دیگر امیدوار آگے چل رہے ہیں۔

وزیراعلی شیوراج سنگھ چوہان بدھنی میں اپنے نزدیکی حریف کانگریس کے ارون یادو سے، وزیر داخلہ بھوپندر سنگھ کھورائی میں کانگریس کے ارونودے سنگھ سے اور کوآپریٹیو کے وزیر وشواس سارنگ کانگریس کے مہندر سنگھ چوہان سے آگے چل رہے ہیں۔ وہیں رابطہ عامہ کے وزیر ڈاکٹر نروتم مشرا دتیا میں کانگریس کے راجندر بھارتی سے پیچھے چل رہے ہیں۔ اس کے علاوہ کچھ دیگر وزیر وں کے پیچھے رہ جانے کی بھی خبریں یہاں پہنچی ہیں۔

اندور ضلع میں بی جے پی کو سبقت حاصل ہے۔ ستنا ضلع میں کانگریس کی سبقت نظر آرہی ہے۔ ضلع بیتول میں بی جے پی آگے چل رہی ہے۔

Loading...

Loading...