مالدہ میں اقلیتی فرقہ کی ریلی میں بھڑکا تشدد، 25 گاڑیاں نذر آتش– News18 Urdu

مالدہ میں اقلیتی فرقہ کی ریلی میں بھڑکا تشدد، 25 گاڑیاں نذر آتش

مالدہ۔ مغربی بنگال کے مالدہ ضلع میں اتوار کو اقلیتی فرقہ کی ریلی میں اچانک تشدد بھڑک اٹھا۔

Jan 05, 2016 11:58 AM IST | Updated on: Jan 05, 2016 11:59 AM IST

مالدہ۔ مغربی بنگال کے مالدہ ضلع میں اتوار کو اقلیتی فرقہ کی ریلی میں اچانک تشدد بھڑک اٹھا۔ یہ ریلی ہندو مہاسبھا کے رہنما کملیش تیواری کے پیغمبر محمد صلی اللہ علیہ وسلم کے بارے میں کئے گئے قابل اعتراض تبصرہ کی مخالفت میں نکالی گئی تھی۔ اس ریلی میں تقریبا 2.5 لاکھ مسلمان شامل ہوئے۔

نیشنل ہائی وے نمبر 34 پر نکالی گئی اس ریلی میں پر تشدد ہجوم نے تقریبا دو درجن گاڑیوں میں آگ لگا دی۔ ضلع کے كالياچک پولیس اسٹیشن پر حملہ بھی کیا گیا۔

مالدہ میں اقلیتی فرقہ کی ریلی میں بھڑکا تشدد، 25 گاڑیاں نذر آتش

Loading...

اس کے بعد پورے علاقے میں دفعہ 144 لگا دی گئی ہے۔ تیواری کی پھانسی کا مطالبہ کر رہے مظاہرین نیشنل ہائی وے پر اتر آئے۔ وہاں سے گزر رہی بس کے ساتھ ریلی میں شامل لوگوں کی پہلے بحث ہوئی۔ بعد میں ہجوم نے بس پر حملہ کر دیا۔ مسافر کسی طرح وہاں سے بچ کر نکل گئے۔ اس کے کچھ دیر بعد مالدہ سے آنے والی بی ایس ایف کی ایک گاڑی کو آگ لگا دی گئی۔

Loading...