پاکستان کے فوجی سربراہ کو گلے لگا کر پھنسے سدھو ، پنجاب وزیر اعلی امریندر سنگھ نے کہا : ان سے پیار دکھانا غلط

کیپٹن امریندر سنگھ نے کہا کہ ہر روز ہمارے جوان شہید ہورہے ہیں ، میں ان کے فوجی سربراہ کو گلے لگانے کے خلاف ہوں

Aug 19, 2018 09:03 PM IST | Updated on: Aug 19, 2018 10:00 PM IST
پاکستان کے فوجی سربراہ کو گلے لگا کر پھنسے سدھو ، پنجاب وزیر اعلی امریندر سنگھ نے کہا : ان سے پیار دکھانا غلط

زیر اعظم عہدہ کیلئے عمران خان کی حلف برداری تقریب میں سدھو پاکستانی فوج کے سربراہ جنرل قمر باجوہ سے گلے ملے تھے

پنجاب کے وزیر اور کانگریس لیڈر نوجوت سنگھ سدھو پاکستان جاکر تنازع میں پھنس گئے ہیں ۔ وزیر اعظم عہدہ کیلئے عمران خان کی حلف برداری تقریب میں سدھو پاکستانی فوج کے سربراہ جنرل قمر باجوہ سے گلے ملے تھے ، جس پر ہندوستان میں کافی ہنگامہ ہورہا ہے ۔ بی جے پی نے ان پر حملے تیز کردئے ہیں۔ وہیں پنجاب کے وزیر اعلی کیپٹن امریندر سنگھ نے بھی سدھو کی مخالفت میں بیان دیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ گلے ملنا ٹھیک نہیں ہے ، انہیں ایسا نہیں کرنا چاہئے۔

امریندر نے کہا کہ ہر روز ہمارے جوان شہید ہورہے ہیں ، میں ان کے فوجی سربراہ کو گلے لگانے کے خلاف ہوں ، سچ یہ ہے کہ انہیں سمجھنا چاہئے تھا کہ ہر روز ہمارے جوان شہید ہورہے ہیں ، کچھ مہینے پہلے ہی میری ریجمنٹ کے ایک میجر اور دو جوان شہید ہوئے تھے ، روزانہ ایسا ہورہا ہے کہ کسی نہ کسی کو گولی لگ رہی ہے ، جس نے بندوق چلائی اور جس نے اس کا حکم دیا وہ ہی اس کے قصوروار ہیں اور حکم دینے والے جنرل باجوہ ہیں ، یہ کہنا کہ میں جنرل باجوہ کو نہیں جانتا، تو یہ تو ان کی یونیفارم پر لکھا تھا ، پاکستانی فوجی سربراہ کے خلاف انہوں نے جو پیار دکھایا ہے وہ غلط ہے۔

ادھر سدھو نے باجوہ کو گلے لگانے کے اپنے قدم کا دفاع کیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ اگر کوئی میرے پاس آئے اور کہے کہ ہم ایک ہی کلچر سے تعلق رکھتے ہیں اور ہم گرو نانک کے 550 ویں پرکاش پرو پر کرتارپور سرحد کو کھولیں گے ، تو میں کیا کرتا ؟ ، سدھو نے پاکستانی مقبوضہ کشمیر کے لیڈر کے پاس بیٹھنے پر بھی صفائی پیش کی ۔ اس پر انہوں نے بتایا کہ اگر آپ کو مہمان کے طور پر بلایا جاتا ہے، تو جہاں بیٹھنے کو کہا جاتا ہے ، آپ وہیں پر بیٹھتے ہیں ، میں کہیں اور بیٹھا تھا ، لیکن مجھے پی او کے کے سربراہ مسعود خان کے پاس بیٹھنے کیلئے کہا گیا ۔

Loading...

Loading...