اعظم گڑھ : فیس بک پر مذہبی تنقید کے تحت تنازع ، اتشزنی کے بعد لاٹھی چارج– News18 Urdu

اعظم گڑھ : فیس بک پر مذہبی تنقید کے تحت تنازع ، اتشزنی کے بعد لاٹھی چارج

اعظم گڑھ کے سرائے میر قصبہ میں ہفتہ کےروز فیس بک پر مذہبی تنقید کئے جانے کی مخالفت میں غصہ بھیڑنے تھانہ کے اندر جم کر توپھوڑ کی ۔

Apr 28, 2018 06:45 PM IST | Updated on: Apr 28, 2018 07:06 PM IST

اعظم گڑھ کے سرائے میر قصبہ میں ہفتہ کےروز فیس بک پر مذہبی تنقید کئے جانے سے ناراض لوگوں کی بھیڑ نے تھانہ کے اندر جم کر توپھوڑ کی ۔ دریں اثناء مظاہرین نے پولیس پر پتھراو شروع کر دیا۔ پتھراو کےدرمیان پولیس کی گاڑی توڑ دی گی۔ جبکہ ایس ڈی ایم نظام آبادباگیش کمار شکلا کو پیر میں چوٹ لگی ہے ۔ پولیس نے جواب میں ہوا میں لاٹھی لہرا کر بھیڑ کو سمنھالا ۔ علاوہ ازیں آنسو گیس کے گولے بھی داغے گئے ۔ احتیاط کے طور پر سرائے میر قصبہ سے لےکر تھانہ تک بڑی تعداد میں پولیس فورس طعینات کر دی گئی ہے ۔

 

اعظم گڑھ : فیس بک پر مذہبی تنقید کے تحت تنازع ، اتشزنی کے بعد لاٹھی چارج

Untitled-design-64

Loading...

 

واضع رہے کہ فیس بک پر مذہبی جذبات مجروح کئے جانے کے دوسرے روز ملزم نوجوان کے خلاف راسوکا لگائے جانے کےمطالبہ کے تحت سیکڑوں کی تعداد میں قصبہ کے لوگ سرائے میر تھانہ پر پہونچ کر نعرے بازی کرنے لگے۔ پولس اہلکاروں کے سمجھانےپر مظاہرین مذیدناراض ہو گئے۔

 

قابل ذکر ہے کہ پر تشدد بھیڑ پتھراو کرتے ہوئے تھانے کے اندر چلی گئی اور پھرپولیس جیپ کوبربادکر دیا ۔جبکہ تھانہ کے اندر توڑ پھوڑ پر آمادہ بھیڑ کو قابومیں کرنے کےلئے پولیس نے لاٹھی چارج کر دیا ۔ اس درمیان بھگدڑ مچ گئی ۔ موقع پر پولیس فورس لگا دی گی ہیں فی الحال حالات قابومیں ہیں۔

 

Loading...