کشمیر : شوپیان میں جنگجوؤں کا سیکورٹی دستہ پر حملہ ، ایک سویلین ڈرائیور ہلاک ، 2 فوجی اہلکار زخمی

جنوبی کشمیر کے ضلع شوپیان میں جمعرات کی شام کو جنگجوؤں کے حملے میں ایک سویلین ڈرائیور ہلاک جبکہ دو فوجی اہلکار زخمی ہوگئے۔

May 04, 2017 11:31 PM IST | Updated on: May 04, 2017 11:31 PM IST

سری نگر: جنوبی کشمیر کے ضلع شوپیان میں جمعرات کی شام کو جنگجوؤں کے حملے میں ایک سویلین ڈرائیور ہلاک جبکہ دو فوجی اہلکار زخمی ہوگئے۔ جنگجوؤں کی جانب سے یہ حملہ ضلع شوپیان میں کم از کم سات گھنٹوں تک جاری رہنے والے تلاشی آپریشن کے واپس بلانے کے دو گھنٹے بعد کیا گیا۔ تاہم فوری طور پر یہ معلوم نہیں ہوسکا کہ جنگجوؤں کے حملے کا نشانہ بننے والی فوجی پارٹی تلاشی آپریشن کا حصہ تھی یا نہیں۔

سرکاری ذرائع نے یو این آئی کو بتایا کہ 62 راشٹریہ رائفلز (آر آر) کے اہلکاروں کا ایک گروپ کرایہ پر لی گئی ایک پرائیویٹ گاڑی کے ذریعے سفر کررہے تھے۔ تاہم جب یہ گاڑی کلورہ نامی گاؤں پہنچی تو جنگجوؤں نے اس پر گھات لگا کر حملہ کیا۔ انہوں نے بتایا کہ سیکورٹی فورسز نے جوابی فائرنگ کی جس کے بعد طرفین کے مابین باضابطہ طور پر جھڑپ کا آغاز ہوا۔ سرکاری ذرائع نے بتایا کہ گولہ باری کے تبادلے میں دو فوجی اہلکار زخمی جبکہ گاڑی کا ڈرائیور گولیاں لگنے سے جاں بحق ہوگیا۔

کشمیر : شوپیان میں جنگجوؤں کا سیکورٹی دستہ پر حملہ ، ایک سویلین ڈرائیور ہلاک ، 2 فوجی اہلکار زخمی

reuters

انہوں نے بتایا کہ حملہ کے مرتکب جنگجوؤں کو ڈھونڈ نکالنے کے لئے علاقہ میں بڑے پیمانے پر تلاشی آپریشن شروع کیا گیا ہے۔ مہلوک ڈرائیور کی شناخت ضلع شوپیان کے رہنے والے نذیر احمد کے بطور کی گئی ہے۔ خیال رہے کہ ضلع شوپیان کے قریب دو درجن سے زائد دیہات میں جمعرات کی صبح شروع کردہ تلاشی آپریشن جنگجوؤں کے ساتھ کوئی آمنا سامنا نہ ہونے کے بعد ختم کیا گیا۔ بڑے پیمانے کا یہ تلاشی آپریشن ظاہری طور پر جنگجوؤں کو ڈھونڈ نکالنے کے لئے شروع کیا گیا تھا۔

Loading...

Loading...