تری پورہ : بی جے پی حامیوں نے بلڈوزر سے توڑا لینن کا مجسمہ ، پھر سر سے کھیلا فٹ بال– News18 Urdu

تری پورہ : بی جے پی حامیوں نے بلڈوزر سے توڑا لینن کا مجسمہ ، پھر سر سے کھیلا فٹ بال

تری پورہ میں پچیس سالہ لیفٹ کے اقتدار کے خاتمہ کے بعد بی جے پی کارکنوں نے ریاست میں ہنگامہ آرائی شروع کردی ہے ۔

Mar 06, 2018 09:05 AM IST | Updated on: Mar 06, 2018 09:05 AM IST

تری پورہ میں پچیس سالہ لیفٹ کے اقتدار کے خاتمہ کے بعد بی جے پی کارکنوں نے ریاست میں ہنگامہ آرائی شروع کردی ہے ۔ جنوبی تری پورہ کے بیلونیا شہر میں بی جے پی حامیوں اور کارکنوں نے روسی انقلاب کے ہیرو ولادمیر لینن کے مجسمہ کو مہندم کردیا ۔ لینن کے مجسمے کو توڑنے کیلئے بلڈوزر کی مدد لی گئی ۔ اس دوران بی جے پی کارکنان بھارت ماتا کی جے کے نعرے بھی لگا رہے تھے ۔

پیر کو تقریبا ساڑھے تین بجے بی جے پی حامیوں نے بلڈوزر کی مدد سے چوراہے پر نصب لینن کے مجسمے کو منہدم کردیا ۔ فی الحال پولیس نے ڈرائیور کو گرفتار کرلیا ہے اور بلڈوزر کو ضبط کرلیا ہے ۔ بیلونیا سے سی پی آئی کے سکریٹری تپس دتا نے کہ کہ وہاں موجود بی جے پی کے کارکنوں نے مجسمہ توڑنے کے بعد اس کے سر کے ساتھ فٹ بال کھیلا ۔ وہ نہ صرف لیفٹ کے دفاتر میں توڑ پھوڑ کررہے ہیں بلکہ کارکنان کے گھروں پر بھی حملہ کرکے انہیں نشانہ بنارہے ہیں ۔

تری پورہ : بی جے پی حامیوں نے بلڈوزر سے توڑا لینن کا مجسمہ ، پھر سر سے کھیلا فٹ بال

Loading...

اس واقعہ پر سی پی آئی ایم نے شدید رد عمل کا اظہار کیا ہے اور اپنی ناراضگی ظاہر کی ہے ۔ ساتھ ہی ساتھ پارٹی نے ایک فہرست جاری کی ہے ، جہاں اس طرح کے پرتشدد واقعات پیش آئے ہیں ۔ پارٹی نے پی ایم مودی اور بی جے پی پر ان کے کارکنان کو ڈرانے کا بھی الزام لگایا ہے۔

Loading...