آسنسول تشدد کا جائزہ لینے مغربی بنگال جا ئے گی بی جے پی– News18 Urdu

آسنسول تشدد کا جائزہ لینے مغربی بنگال جا ئے گی بی جے پی

آسنسول تشدد کو لیکر بی جے پی صدر امت شاہ نے ایک کمیٹی بنائی ہے جو پورے معاملے کا جائزہ لے گی۔

Mar 30, 2018 03:00 PM IST | Updated on: Mar 30, 2018 03:00 PM IST

آسنسول تشدد کو لیکر بی جے پی صدر امت شاہ نے ایک کمیٹی بنائی ہے جو پورے معاملے کا جائزہ لے گی۔اوم ماتھر کی قیادت میں بی جے پی کا وفد اسنسول جائے گا۔اس وفد میں شاہنواز حسین ،روپا گانگلی اور بی ڈی رام بھی موجود رہیں گے۔مغربی بنگالکے اسنسول میں تشدد کے بعد انٹرنیٹ خدمات بھی مکمل طرح سے بند کر دی گئی ہیں۔پورے علاقے میں دفعی 144 نافذ کر دی گئی ہے۔

غور طلب ہیکہ مغربی بنگال کے رانی گنج میں رامنومی کے دن تشدد بھڑک گیا تھا۔جو دوسرے دن آسنسول تک پہنچ گئی ۔تشدد کے دوران دو درجن سے زیادہ گھروں اور دکانوں میں آگ لگا دیگئی۔معاملے کی سنجیدگی کو دیکھتے ہوئے علاقے میں کرفیو نافذ کر دیا گیا ہے۔

آسنسول تشدد کا جائزہ لینے مغربی بنگال جا ئے گی بی جے پی

علامتی تصویر

Loading...

بتادیں کہ اس سے پہلے مغربی بنگال کے آسنسول میں مرکزی وزیر بابل سپریو کے خلاف دو معاملے درج کئے گئے ہیں۔بابل پر الزام ہیکہ انہوں نے دفعہ 144 کی خلاف ورزی کی ہے۔بابل سپریو کے مقامی پولیس نے فساد سے متاثر علاقے میں جانے سے منع کیا تھا لیکن انہوں نے انتظامیہ کی بات نہ مان کر فساد متاثر علاقوں کا دورہ کیا۔رکن اسمبلی سپریو پر یہ بھی الزام لگا ہیکہ انہوں نے آئی پی ایس روپیش کمار پر اپنے دورے کے دوران حملہ بھی کیا۔

Loading...