میری جنگ ترون گگوئی کے خلاف نہیں، غربت کے خلاف ہے: نریندر مودی– News18 Urdu

میری جنگ ترون گگوئی کے خلاف نہیں، غربت کے خلاف ہے: نریندر مودی

گوہاٹی۔ وزیر اعظم نریندر مودی نے آسام میں اپنے دو روزہ انتخابی مہم کا آغاز کرتے ہوئے آج کہا کہ بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) ریاست کے لئے ترقی، تیز رفتار ترقی اور تمام شعبوں میں ترقی کے تین نکاتی ایجنڈے پر کام کر رہی ہے۔

Mar 26, 2016 02:41 PM IST | Updated on: Mar 26, 2016 02:44 PM IST

گوہاٹی۔ وزیر اعظم نریندر مودی نے آسام میں اپنے دو روزہ انتخابی مہم کا آغاز کرتے ہوئے آج کہا کہ بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) ریاست کے لئے ترقی، تیز رفتار ترقی اور تمام شعبوں میں ترقی کے تین نکاتی ایجنڈے پر کام کر رہی ہے۔ مشرقی آسام کے تنسكيا میں پہلی انتخابی ریلی سے خطاب کرتے ہوئے مسٹر مودی نے وزیر اعلی ترون گوگوئی پر نشانہ لگاتے ہوئے کہا، ’’میری جنگ مسٹرگگوئی کے خلاف نہیں بلکہ غربت کے خلاف ہے۔ مجھے کرپشن، غربت، برائیوں اور آسام کی بربادی کے خلاف لڑنا ہے‘‘۔

انہوں نے 80 سالہ مسٹر گوگوئی اور بی جے پی کے وزیر اعلی کے عہدے کے امیدوار سربانند سونووال کے درمیان عمر کے فرق پر بھی نشانہ لگایا۔ انہوں نے کہا کہ اس الیکشن

میری جنگ ترون گگوئی کے خلاف نہیں، غربت کے خلاف ہے: نریندر مودی

میں دہلی کے ساتھ میرا بھی نقصان ہونے والا ہے کیونکہ مسٹر سونووال ہمارے بہترین وزرا میں سے ایک ہیں۔ مسٹر مودی نے اپنی اور مسٹر گوگوئی کی عمر کے فاصلے پر چٹکی لیتے ہوئے کہا، ’’کچھ سال بعد ان کانگریس لیڈروں کی عمر 90 سال ہو جائے گی۔ مسٹر گگوئی کہتے ہیں کہ ان کی لڑائی میرے ساتھ ہے لیکن ہماری ثقافت ہمیں بڑوں کے ساتھ لڑنا نہیں سکھاتی۔ میں ان سے لڑنا نہیں چاہتا بلکہ میں آسام کے لوگوں کی آشیرواد کی طرح ہی ان کا بھی آشیرواد لیناچاہتا ہوں‘‘۔

مسٹر سونووال کی تعریف کرتے ہوئے انہوں نے کہا، ’’آسام انتخابات کے بعد جب بی جے پی یہاں حکمراں ہوگی اور مسٹرسونووال وزیر اعلی بنیں گے تو میں اپنی وزارت کے سب سے شاندار اور نوجوان رکن کو کھو دوں گا لیکن یہ آسام کے لئے فائدہ مند ہو گا‘‘۔ مسٹر مودی نے کہا کہ کانگریس گزشتہ 60 برسوں سے آسام میں اقتدار میں ہے اور بی جے پی یہاں کبھی نہیں جیتی۔ آزادی کے وقت ملک کی پانچ اہم ریاستوں میں شامل آسام اب پسماندہ پانچ ریاستوں میں سے ایک ہے۔ اس انتخابات کے بعد آسام کو ایک نوجوان وزیر اعلی مل جائے گا۔ آسام جلد ہی ایسی ترقی یافتہ ریاست ہوگی، جہاں بچوں کو پڑھایا جائے گا کہ ’اے‘ فار آسام۔ انہوں نے کہا کہ بی جے پی ریاست میں ترقی، تیز رفتار ترقی اور تمام شعبوں میں ترقی کے تین نکاتی ایجنڈے پر کام کر رہی ہے جس سے آسام کی قسمت بدل سکتی ہے۔ لوگوں سے بی جے پی کو ووٹ دینے کی اپیل کرتے ہوئے مسٹر مودی نے کہا کہ ایک بٹن دبانے سے لوگ یہاں ترقی کے نئے دور کا آغاز کر سکتے ہیں۔

Loading...

وزیر اعظم آج ہی ماجولي، نارائن پور، بوكاكھاٹ اور جورہاٹ میں اور کل رنگ پاڑہ اور هیلاكنڈي میں انتخابی ریلیوں سے خطاب کریں گے۔ آسام کی 126 اسمبلی سيٹوں کے لئے دو مرحلوں میں چار اور 11 اپریل کو پولنگ ہونی ہے۔

Loading...