صحافی سندیپ کوٹھاری کو زندہ جلایا گیا تھا– News18 Urdu

صحافی سندیپ کوٹھاری کو زندہ جلایا گیا تھا

مدھیہ پردیش کے صحافی سندیپ کوٹھاری کے سنسنی خیز قتل کیس میں سامنے آنے والی پوسٹ مارٹم کی تفصیلی رپورٹ میں صحافی کو زندہ جلاکر مارنے کا انکشاف ہوا ہے

Jul 11, 2015 02:25 PM IST | Updated on: Jul 11, 2015 02:51 PM IST

صحافی سندیپ کوٹھاری کو زندہ جلایا گیا تھا

مدھیہ پردیش کے صحافی سندیپ کوٹھاری کے سنسنی خیز قتل کیس میں سامنے آنے والی پوسٹ مارٹم کی تفصیلی رپورٹ میں صحافی کو زندہ جلاکر مارنے کا انکشاف ہوا ہے۔ ملزمان سے اب تک ہوئی پوچھ تاچھ سے یہ سمجھا جارہا تھا کہ صحافی کو مار کر اس کی لاش جلائی گئی تھی۔ اس قتل کیس میں اب تک پولیس اور تفتیشی ایجنسیاں یہ مان کر جانچ کررہی تھیں کہ ملزمان کے ہاتھوں مذکورہ صحافی کے اغوا کے بعد ہوئی جھڑپ اور اس کے بعد اسے دبانے کی وجہ سے دم گھٹنے سے سندیپ کی موت ہوئی ہے اورمرنے کے بعد ملزمان نے اس کی لاش کو جلایا ہے، لیکن مہاراشٹر کے وردھا سینٹرل ہاسپٹل کے ڈاکٹروں کی ٹیم نے پوسٹ مارٹم کی تفصیلی رپورٹ میں یہ واضح کیا ہے کہ جلنے کیوجہ سے سنیدپ کی موت ہوئی ہے۔ مقتول صحافی کے پھیپھڑے میں کاربن پایا گیا ہے جو کہ جلائے جانے کے دوران سانس لینے پر ہی ممکن ہے۔ پولیس ذرائع کے مطابق پوسٹ مارٹم کی رپورٹ میں ڈاکٹروں نے صحافی کی موت کے دو اسباب کا ذکر کیا ہے جس میں جزوی طور پر دم گھٹنا اور تقریباً 92 فیصد جل جانے کی وجہ سے اس کی موت ہونا بتایا ہے۔ 
Loading...

 

Loading...