ویاپم سے متعلق پانچ معاملوں کی سی بی آئی نئے سرے سے انکوائری شروع کرے گی

فرضی گھوٹالے کی فائلیں مرکزی تفتیشی بیورو (سی بی آئی) کو سونپ دی گئی ہے۔

Jul 21, 2015 10:51 PM IST | Updated on: Jul 21, 2015 10:53 PM IST
ویاپم سے متعلق پانچ معاملوں کی سی بی آئی نئے سرے سے انکوائری شروع کرے گی

بھوپال : مدھیہ پردیش میں گنا شہر کے کینٹ شانے میں درج ویاپم سے متعلق پانچ معاملوں کی تفصیلات طلب کئے جانے کے بعد اس فرضی گھوٹالے کی فائلیں مرکزی تفتیشی بیورو (سی بی آئی) کو سونپ دی گئی ہے۔ سی بی آئی نئے سرے سے ان تمام معاملوں کی انکوائری کرنے کے ساتھ ساتھ پکڑے گئے ملزمان سے پوچھ تاچھ کرکے نئی رپورٹ تیار کرے گی۔ سی بی آئی نے ریاست بھر کے اضلاع میں سامنے آئے اس فرضی گھوٹالے سے متعلق تمام تفصیلات ماضی میں تشکیل شدہ ایس آئی ٹی سے حاصل شروع کردی ہیں۔ سی بی آئی نے اپنی ابتدائی جانچ میں اس بات کا پتہ لگائے گی کہ ان فائلوں میں ملزمان کے خلاف کس طرح کی کارروائی کی گئی ہے۔ کینٹ تھانے میں سال 2009 سے 2014 تک پی ایم ٹی گھوٹالے سے متعلق پانچ معاملے سامنے آئے تھے۔ گزشتہ برس ایک طالب علم کو نقل کرتے ہوئے پکڑا گیاتھا۔ ملزمان کی پکڑ دھکڑ میں مصروف پولیس نے اس گھوٹالے کے ماسٹر مائنڈ وید رتن کو اپنی گرفت میں لے لیاتھا۔ پولیس کے ذرائع کے مطابق کینٹ تھانے میں گھوٹالے سے متعلق تمام معاملوں کی تفصیلات سی بی آئی کو بھیج دی گئی ہے ۔ ایس آئی ٹی کو فی الحال تحلیل نہیں کیاگیا ہے۔ سی بی آئی اور مقامی سطح پر تشکیل شدہ ایس آئی ٹی مشترکہ طور پر انکوائری کرے گی۔

Loading...

Loading...