مرکزی وزیر مختار عباس نقوی کا اقلیتی اکثریتی علاقوں میں 100سنٹرل اسکول کھولنے کا اعلان

مختار عبادس نقوی نے کہاکہ سماج کے تمام فرقوں کے لوگوں معیار بند تعلیم دستیاب کرانے کے مقصد سے آئندہ برس اقلیتی اکثریتی علاقوں میں 100سنٹرل اور نوودے ودیالیہ کھولے جائیں گے۔

Oct 30, 2017 03:31 PM IST | Updated on: Oct 30, 2017 03:31 PM IST

نئی دہلی : اقلیتی امور کے مرکزی وزیر مختار عبادس نقوی نے آج کہاکہ سماج کے تمام فرقوں کے لوگوں معیار بند تعلیم دستیاب کرانے کے مقصد سے آئندہ برس اقلیتی اکثریتی علاقوں میں 100سنٹرل اور نوودے ودیالیہ کھولے جائیں گے۔ مسٹر نقوی نے’نئے ہندستان کی تعمیر میں اقلیتوں کی شرکت‘ کے عنوان کے تحت یہاں منعقد تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ سنٹرل اور نوودے ودیالیہ کے حکام سے اسلسلہ میں بات چیت ہوئی ہے اور انہوں نے ان اسکولوں کوکھولنے پر اتفاق رائے ظاہر کیا ہے۔ اس کے لئے مالی مسا ئل حل کر لئے گئے ہیں اور وزارت اقلیتی امور اساتذہ کی تنخؤاہ، تربیت اور لیباریٹریوں کے لئے فنڈ دستیاب کرائے گی۔

انہوں نے کہاکہ مدرسوں میں بچوں کو ’مڈ ڈے میل‘ دیا جائے گا۔ کسی بھی مدرسہ کو بیت الخلا کی تعمیر کے لئے مالی مدد دستیاب کرائی جائے گی اور اس کے دیکھ ریکھ کا خرچ بھی وزارت اقلیتی امور برداشت کرے گی۔ انہوں نے کہاکہ اقلیتی فرقوں کے نوجوانوں کو روزگار مہیا کرانے کے لئے پورے ملک میں جلد ہی چالیس سے تیس غریب نواز ہنرمندی کو فروغ کے سنٹر قائم کئے جائیں گے۔ ان اداروں میں تربیت لینے والے کم از کم 75تربیت یافتہ نوجوانوں کو روزگار دستیاب کرایا جائے گا۔

مرکزی وزیر مختار عباس نقوی کا اقلیتی اکثریتی علاقوں میں 100سنٹرل اسکول کھولنے کا اعلان

بی جے پی کے سینئر لیڈر اور مرکزی وزیر مختار عباس نقوی

Loading...

Loading...

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز