Live Results Assembly Elections 2018

جموں و کشمیر : 2017 میں 117 مقامی نوجوان دہشت گرد تنظیموں میں ہوئے شامل ، جنوبی کشمیر اہم مرکز

سال 2017 میں دہشت گرد تنظیموں میں شامل ہونے والے کشمیری نوجوانوں کی تعداد میں کافی اضافہ ہوا ہے۔

Dec 24, 2017 09:27 PM IST | Updated on: Dec 24, 2017 09:27 PM IST

سری نگر : سال 2017 میں دہشت گرد تنظیموں میں شامل ہونے والے کشمیری نوجوانوں کی تعداد میں کافی اضافہ ہوا ہے۔ نوجوانوں کے دہشت گرد تنظیموں میں شامل ہونے کے اعداد و شمار اکٹھا کرنے کا کام 2010 میں شروع ہونے کے بعد یہ پہلا موقع ہے جب ایسے نوجوانوں کی تعداد 100 سے تجاوز کرگئی ہے۔ اتوار کو افسروں نے یہ اطلاع دی۔

سیکورٹی ایجنسیوں کی رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ 2016 میں یہ تعداد جہاں 88 تھی ، وہیں 2017 میں نومبر تک ہی یہ تعداد 117 تک پہنچ گئی ۔ حزب المجاہدین اور لشکرطیبہ جیسی دہشت گرد تنظیموں کو افراد فراہم کرنے کیلئے جنوبی کشمیرایک اہم سینٹر کے طور پر سامنے آیا ہے۔

جموں و کشمیر : 2017 میں 117 مقامی نوجوان دہشت گرد تنظیموں میں ہوئے شامل ، جنوبی کشمیر اہم مرکز

رپورٹ کے مطابق اس سال مختلف دہشت گرد تنظیموں میں شامل ہونے والے مقامی نوجوانوں کی تعداد میں 12 اننت ناگ ، 45 پلوامہ اور اونتی پور ، 24 شوپیاں اور 10 کلگام کے ہیں ۔ شمالی کشمیر سے اعدادوشمار میں کپواڑہ سے چار ، بارہمولہ اور سوپور سے چھ چھ جبکہ باندی پورہ سے سات نوجوان دہشت گردوں کی صفوں میں شامل ہوئے ہیں۔

علاوہ ازیں وسطی کشمیر میں آنے والے سری نگر ضلع سے پانچ جبکہ بڈگام سے چار نوجوان دہشت گرد تنظیموں میں شامل ہوئے ۔ یہ رپورٹ وادی میں چلائی گئی متعدد انسداد دہشت گردی مہم کے دوران گرفتار کئے گئے دہشت گردوں سے پوچھ تاچھ اور دیگر ذرائع سے حاصل معلومات کی بنیاد پر تیار کی گئی ہے۔

Loading...

Loading...

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز