جموں و کشمیر : ساڑھے 10 مہینوں میں 80 ملکی اور 110 غیر ملکی دہشت گرد مار گرائے گئے : ہندستانی فوج

Nov 19, 2017 06:07 PM IST | Updated on: Nov 19, 2017 06:07 PM IST

سری نگر: ہندوستانی فوج کی 15 ویں کورپس کے کمانڈر لیفٹیننٹ جنرل جے ایس سندھو نے انکشاف کیا کہ وادی میں رواں برس کے ساڑھے دس مہینوں کے دوران 190 مقامی اور غیرملکی جنگجوؤں کو ہلاک کیا گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ وادی میں اس وقت قریب 200 مقامی اور غیر ملکی جنگجو موجود ہیں۔ جے ایس سندھو نے یہ اعداد وشمار اتوار کو یہاں حاجن مسلح تصادم کے حوالے سے بلائی گئی نیوز کانفرنس میں منکشف کئے۔

بادامی باغ میں واقع 15 ویں کورپس کے ہیڈکوارٹر میں منعقدہ سیکورٹی عہدیداروں کی اس مشترکہ نیوز کانفرنس میں ریاستی پولیس کے سربراہ ڈاکٹر شیش پال وید ، آئی جی پی کشمیر منیر احمد خان، آئی جی سی آر پی ایف (آپریشنز) ذوالفقار حسن اور فوج کی وکٹر فورس کے جی او سی میجر جنرل بی ایس راجو بھی موجود تھے۔

جموں و کشمیر : ساڑھے 10 مہینوں میں 80 ملکی اور 110 غیر ملکی دہشت گرد مار گرائے گئے : ہندستانی فوج

فائل فوٹو

لیفٹیننٹ جنرل سندھو نے نیوز کانفرنس کے آغاز میں ہی کہا ’کشمیر میں اس سال ہمارے بیشتر آپریشنز کامیاب رہے ہیں۔ ہم نے امسال آج تک 190 جنگجوؤں کو مار گرایا ہے۔ ان 190 جنگجوؤں میں 80 مقامی جبکہ 110 غیرملکی جنگجو ہیں۔ 110 غیرملکی جنگجوؤں میں سے66 کو لائن آف کنٹرول کے نذدیک دراندازی کی کوشش کرتے ہوئے مارا گرایا گیا۔ ہم نے امسال تقریباً 125 سے 130 جنگجوؤں کو وادی کے اندرونی علاقوں میں مارا گرایا‘۔

وادی میں موجود جنگجوؤں کی تعداد سے متعلق ایک سوال کے جواب میں لیفٹیننٹ سندھو نے کہا ’درست اعداد وشمار فراہم کرنا ہمارے لئے ممکن نہیں ہے۔ اعداد وشمار بدلتے رہتے ہیں۔ وادی میں موجود جنگجوؤں کی تعداد قریب 200 ہے۔ ان میں سے مقامی جنگجووں کی تعداد 110 سے 120 ہے جبکہ غیرملکیوں کی تعداد قریب 100 ہے‘۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز