مودی کے لکھنؤ دورے کے دوران نقض امن کے خدشہ کے تحت 24 مشتبہ طلبہ گرفتار

Jun 20, 2017 05:33 PM IST | Updated on: Jun 20, 2017 05:33 PM IST

لکھنؤ۔  وزیر اعظم نریندر مودی کے پروگرام کے دوران خلل ڈالنے کےخدشے کے پیش نظر لکھنؤ پولس نے مختلف تنظیموں سے وابستہ 24 طالب علموں کو گرفتار کیا ہے۔ سینئر پولس سپرنٹنڈنٹ دیپک کمار کے مطابق محکمہ اطلاعات سے موصولہ معلومات کے مطابق مسٹر مودی کے دو روزہ لکھنؤ دورے کے دوران سماجوادی طلبہ تنظیم کے علاوہ مختلف تنظیموں سے وابستہ 24 طالب علموں کو پولس نے حراست میں لیا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ کچھ خفیہ اطلاعات کے بعد وزیر اعظم کے دورے کے سلسلے میں پولس انتہائی سرگرم ہے۔ ان کے دورے میں خلل پیدا کرنے کے خدشےکے سبب آج سویرے سی ہی لکھنؤ شہر کے مختلف علاقوں میں چھاپہ ماري کرکے سماجوادی چھاتر سبھا کے علاوہ دیگر تنظیموں سے وابستہ 24 طالب علموں کو حراست میں لے لیا گیا۔

مسٹر دیپک کمار نے بتایا کہ وزیر اعظم کے دورے کو دیکھتے ہوئے مشتبہ افراد کی گرفتاری کے لئے میٹروپولیٹن، حسن گنج اور آشیانہ میں چھاپہ ماری کی گئی۔ انہوں نے بتایا کہ کل 21 جون کو "عالمی یوم یوگا " کے علاوہ آج شام سی ڈی آر آئی اور پروگراموں کے دوران چند شرپسند طلبہ پروگرام میں خلل ڈال سکتے ہیں۔ پولس کو ایل آئی یو نے 27 طلبہ و طالبات کی فہرست دی ہے جو شک کے دائرے میں ہیں۔ ان میں سماج وادی طلبہ یونین کے علاوہ آئیسا سے وابستہ چند طالب علموں کےنام بھی شامل ہیں۔ واضح ر ہے کہ مسٹر مودی کے لکھنؤ دورے کے پیش نظر یہاں سکیورٹی کے پختہ انتظامات کئے گئے ہیں۔

مودی کے لکھنؤ دورے کے دوران نقض امن کے خدشہ کے تحت 24 مشتبہ طلبہ گرفتار

وزیر اعظم مودی: فائل فوٹو

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز