من کی بات میں مودی نے کہا : میری طویل باتوں پر لوگوں نے کی شکایت ، اب 50 منٹ ہی بولوں گا

Jul 30, 2017 12:56 PM IST | Updated on: Jul 30, 2017 01:20 PM IST

نئی دہلی : وزیر اعظم مودی جمعہ کو 34 ویں مرتبہ ریڈیو پر 'من کی بات کے پروگرام میں ملک کے عوام سے خطاب کیا ۔ من کی بات میں وزیر اعظم نے کہا کہ بہت سے لوگوں نے ان سے شکایت کی کہ ان کی 15 اگست کی تقریر کافی طویل تھی ۔ انہوں نے کہا کہ لوگوں کہ شکایات کو ذہن میں رکھتے ہوئے وہ اس مرتبہ اپنی تقریر 40 سے 50 منٹ میں سمیٹنے کی کوشش کریں گے۔

وزیر اعظم مودی نے گزشتہ دنوں منعقد ہ وومین ورلڈ کپ کے دوران ٹیم انڈیا کو ملک بھر سے ملے جوش اور فائنل میں شکست کے بعد بھی عوام جس طرح ٹیم کے ساتھ کھڑے رہے اور کھلاڑیوں کا حوصلہ افزائی ، وزیراعظم نے اس کی بھی تعریف کی۔

من کی بات میں مودی نے کہا : میری طویل باتوں پر لوگوں نے کی شکایت ، اب 50 منٹ ہی بولوں گا

پی ایم مودی کے من کی بات کی 6 اہم باتیں 

وزیر اعظم نے اپنی تقریر کا آغاز ماحولیات سے کی۔ انہوں نے کہا کہ ماحولیات میں آ تبدیلی سے بہت کچھ بدل رہا ہے۔ انہوں نے ملک کے کئی حصوں میں سیلاب پر کہا کہ حکومت کی اس پر نظر ہے اور وہ ہر ممکن مدد کی کوشش کر رہی ہے۔ انہوں نے مشکل گھڑی میں آگے آکر لوگوں کی مدد کرنے والوں کی تعریف بھی کی۔

اس ماہ کے آغاز میں نافذ ہوئے گڈس اینڈسروسز ٹیکس (جی ایس ٹی) پر بات کرتے ہوئے وزیر اعظم مودی نے کہا کہ ملک میں جی ایس ٹی کا مثبت اثر پڑا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اس سے معیشت کو مضبوطی ملی ہے۔ چیزیں سستی ہوئی ہیں۔ انہوں نے جی ایس ٹی کے لئے تمام ریاستوں کو مبارک باد دی۔

وزیر اعظم نے اگست کو انقلاب کا مہینہ بتاتے ہوئے کہا کہ اسی مہینہ ہندوستان میں آزادی کیلئے انقلاب آیا تھا۔ انہوں نے کہا کہ 1857 سے انقلاب شروع ہوا، وقت بدلا، نسلیں بدليں ، مگر آزادی کی تحریک چلتی رہی جو 1947 تک چلی۔ وزیر اعظم نے کہا کہ ہم اس سال بھارت چھوڑو تحریک کی 75 ویں سالگرہ منا رہے ہیں۔ انہوں نے مہاتما گاندھی اور 'بھارت چھوڑو کا نعرہ دینے والے ڈاکٹر یوسف مہر علی کو بھی یاد کیا۔

اس سال ہماری آزادی کو 70 سال پورے ہو جائیں گے ۔ 70 سالوں میں ملک میں روزگار بڑھانے، بے روزگاری کم کرنے کی کوشش کی گئی۔ انہوں نے اس سال 15 اگست کو قرارداد کے دن کے طور پر منانے کی اپیل کی۔ انہوں نے کہا کہ غربت، نسل پرستی سے ہندوستان کو آزاد کرانے کا عزم کریں۔

وزیر اعظم نے کہاکہ رکشا بندھن، گنیش پوجا اور دیوالی جیسے تہواروں میں کتنے لوگوں کو روزگار ملتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ تہواروں میں ماحولیاتی تحفظ کی بھی ضرورت ہے۔ انہوں نے ہم وطنوں سے اپیل کی ان تہواروں میں غریبوں کی مدد کا عزم کریں ۔

گنیش اتسو کے دوران ملک کے کئی حصوں خاص طور پر مہاراشٹر میں گنپتی کی مورتیاں نصب کر کے ان کی پوجا کی جاتی ہے۔ وزیر اعظم نے کہا کہ گنپتی کی مورتیاں مٹی کی بنائی جائیں اور ان کی پوجا کی جائے۔ انہوں نے ملک کے باشندوں کو آنے والے تہوار کی مبارک بھی دی۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز