دلی اسمبلی میں عآپ اراکین اسمبلی نے کپل مشرا کے ساتھ کی مار پیٹ

May 31, 2017 03:42 PM IST | Updated on: May 31, 2017 03:42 PM IST

نئی دہلی۔ دلی اسمبلی میں بدھ کو عام آدمی پارٹی (آپ) کے معطل رکن اسمبلی کپل مشرا اور 'آپ' ممبران اسمبلی میں جم کر مار پیٹ ہوئی۔ ہنگامہ بڑھتا دیکھ اسمبلی اسپیکر نے انہیں خصوصی اجلاس سے باہر نکال دیا۔ کپل روتے ہوئے اسمبلی سے باہر نکلے۔ رپورٹوں کے مطابق، کپل مشرا رام لیلا میدان میں خصوصی اجلاس بلانے کے لئے بینر لہرا رہے تھے۔ اسی دوران 'آپ' ممبران اسمبلی سے ان کی مار پیٹ ہو گئی۔

اسمبلی سے باہر نکل کر کپل مشرا نے کہا، 'میں نے کل اسمبلی کے اسپیکر کو خط لکھ کر 5 منٹ کا وقت مانگا تھا۔ وہیں، اروند کیجریوال اور ستیندر جین کے گھوٹالوں پر رام لیلا میدان میں کھلا خصوصی اجلاس بلانے کا مطالبہ کیا تھا۔ اسی معاملے پر اسمبلی میں اپنا موقف رکھنے کے دوران رکن اسمبلی مدن لال اور امانت اللہ خان مجھے لات گھونسے سے مارنے لگے۔ آپ ویزوئل نکالیں تو پتہ چل جائے گا کہ منیش سسودیا کے اشارے پر مارپیٹ ہوئی ہے۔

دلی اسمبلی میں عآپ اراکین اسمبلی نے کپل مشرا کے ساتھ کی مار پیٹ

کپل نے کہا، وسیم احمد خان کو ایک منٹ کی آڈیو پر ہٹانے والے اروند کیجریوال اس مسئلے پر خاموش کیوں ہیں۔ میں 3 جولائی کو كانسٹی ٹيوشن کلب آف انڈیا میں نمائش لگا رہا ہوں۔

بتا دیں کہ کپل مشرا نے دہلی اسمبلی کے اسپیکر رام نواس گوئل کو ایک خط لکھا تھا۔ اس میں انہوں نے لکھا تھا، 'وزیر اعلی اروند کیجریوال اور وزیر صحت ستیندر جین کے خلاف کچھ ثبوت عوام کے سامنے رکھنا چاہتا ہوں۔ اس کے لئے ضروری ہے کہ ایوان کا خصوصی اجلاس کھلے میں یعنی رام لیلا میدان میں بلایا جائے۔ اگر اروند کیجریوال اور ستیندر جین کو اپنی ایمانداری پر ذرا سا بھی بھروسہ ہوگا تو وہ میرے اس مطالبے کی حمایت کریں گے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز