جنوبی کشمیر میں مسلح تصادم، لشکر طیبہ کا اعلیٰ کمانڈر ابو دوجانہ ہلاک

Aug 01, 2017 11:32 AM IST | Updated on: Aug 01, 2017 11:32 AM IST

سری نگر۔ جنوبی کشمیر کے ضلع پلوامہ میں ایک شبانہ مسلح تصادم کے دوران لشکر طیبہ سے منسلک ایک انتہائی مطلوب کمانڈر ابو دوجانہ سمیت 2 جنگجوؤں کو ہلاک کردیا گیا ہے۔ شمالی پاکستان کا رہنے والا ابودوجانہ عرف حفیظ گذشتہ کئی برسوں سے جنوبی کشمیر میں سرگرم تھا اور متعدد مرتبہ سیکورٹی فورسز کو چکمہ دیکر فرار ہونے میں کامیاب رہا۔ سیکورٹی ایجنسیوں نے ابو دوجانہ کے سر پر 8 لاکھ روپے کا انعام مقرر کیا تھا۔ مسلح تصادم میں دو جنگجوؤں کے مارے جانے کی خبر پھیلنے کے ساتھ ضلع پلوامہ کے مختلف دیہات میں بڑے پیمانے پر احتجاجی مظاہرے شروع ہوگئے ہیں۔

سرکاری ذرائع نے بتایا کہ ضلع پلوامہ کے ہاکری پورہ میں جنگجوؤں کی موجودگی سے متعلق مصدقہ اطلاع ملنے پر سیکورٹی فورسز اور جموں وکشمیر پولیس کے اسپیشل آپریشن گروپ (ایس او جی) نے مذکورہ گاؤں میں گذشتہ رات وسیع تلاشی آپریشن شروع کیا۔ انہوں نے بتایا کہ جب سیکورٹی فورسز مذکورہ گاؤں میں ایک مخصوص کی جانب پیش قدمی کررہے تھے تو وہاں موجود جنگجوؤں کے ایک گروپ نے سیکورٹی فورسز پر اپنی بندوقوں کے دھانے کھول دیے۔ ذرائع نے بتایا کہ ’سیکورٹی فورسز نے جوابی فائرنگ کی جس کے بعد طرفین کے مابین باضابطہ طور پر گولہ باری کا تبادلہ شروع ہوا‘۔انہوں نے بتایا ’ مسلح تصادم میں انتہائی مطلوب کمانڈر ابو دوجانہ سمیت 2 جنگجوؤں کے مارے جانے کی اطلاع ہے‘۔ انہوں نے بتایا کہ آخری اطلاعات ملنے تک علاقہ میں تلاشی آپریشن جاری تھا۔ ایک رپورٹ کے مطابق سیکورٹی فورسز نے جنگجوؤں کو ہلاک کرنے کے لئے ایک رہائشی مکان کو دھماکہ خیز مواد سے زمین بوس کردیا۔

جنوبی کشمیر میں مسلح تصادم، لشکر طیبہ کا اعلیٰ کمانڈر ابو دوجانہ ہلاک

تصویر: نیوز ۱۸

مسلح تصادم میں مارے گئے دوسرے جنگجو کی شناخت عارف للہاری کے بطور ظاہر کی جا رہی ہے۔ پاکستان کے شمالی علاقہ گلگت بلتستان کے رہنے والے ابودوجانہ نے انٹیلی جنس بیورو ڈوزیئر کے مطابق 17 سال کی عمر میں جنگجوؤں کی صفوں میں شمولیت اختیار کی تھی۔ وادی میں دراندازی کے بعد وہ زیادہ تر وقت جنوبی ضلع پلوامہ میں ہی سرگرم رہا۔ اگرچہ وادی میں ابو دوجانہ کو لشکر طیبہ کمانڈر عبدالرحمان عرف ابو قاسم کا نائب قرار دیا گیا تھا، تاہم سال 2005 میں ابو قاسم کی ایک مسلح تصادم میں موت ہوجانے کے بعد ابودوجانہ کو وادی میں لشکر طیبہ کا کمانڈر بنایا گیا تھا۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز