تینوں فوجوں کو تعلیم دینے والا منفرد خوش قسمت ادارہ بنا جامعہ ملیہ اسلامیہ

Sep 28, 2017 08:58 PM IST | Updated on: Sep 28, 2017 08:58 PM IST

نئی دہلی: جامعہ ملیہ اسلامیہ اور ملکی فوج کے درمیان آج ایک مفاہمتی یادداشت پر دستخط کئے گئے جس کے مطابق ملکی فوج کے جوان اور افسر ن اس یونیورسٹی سے اوپن لرننگ کے ذریعہ گریجویٹ اور پوسٹ گریجویٹ کی تعلیم حاصل کر سکیں گے۔ جامعہ ملیہ اسلامیہ اورملک کے فضائی اور بحری فوج کے ساتھ اس طرح کا ایک معاہدہ پہلے ہی ہو چکا ہے۔آج انڈین آرمی کے ساتھ بھی اس طرح کے مفاہمتی یادداشت پر دستخط ہو جانے سے جامعہ تینوں فوجوں کو تعلیم دینے والا ملک کا منفرد خوش قسمت ادارہ بن گیا ہے۔ 160 ہندوستان کی تینوں افواج میں جامعہ کا یہ پروگرام بہت مقبول ہے کیونکہ اس وجہ سے کم پڑھے نوجوانوں کو اپنی تعلیم مکمل کر سکنے کا موقع مل سکے گا۔ ہندوستانی فضائیہ اور بحریہ کے 12 ہزار سے زیادہ جوان پہلے ہی ہوئے اس طرح کے مفاہمتی یادداشت کے تحت جامعہ سے تعلیم لے رہے ہیں۔

جامعہ میں آج اس سے مفاہمتی یادداشت پر وزارت دفاع کے ہیڈ کوارٹر کے ایجی ٹانٹ لیفٹیننٹ جنرل اشونی کمار اور یونیورسٹی کے وائس چانسلر پروفیسر طلعت احمد نے دستخط کئے۔ اس تقریب کے بعد لیفٹیننٹ جنرل اشونی کمار نے کہا، آزادی کی لڑائی کا حصہ رہے جامعہ سے اس طرح کے معاہدہ سے انہیں بہت خوشی اور تفاخر کا احساس ہو رہا ہے۔ قومیت کی بنیاد پر تعلیم دینے والے جامعہ کا ہندوستان کی ترقی میں نمایاں کردار ہے۔ انہوں نے کہا کہ آج اشٹمی کے موقع پر اس مفاہمت کی یادداشت پر دستخط ہونا اور بھی’ شبھ‘ ہو گیا ہے۔

تینوں فوجوں کو تعلیم دینے والا منفرد خوش قسمت ادارہ بنا جامعہ ملیہ اسلامیہ

لیفٹیننٹ جنرل اشونی کمار نے بتایا کہ فوج میں عموما 16۔17 سال کی عمر میں نوجوان بھرتی ہوکر 35۔36 سال میں ریٹائر ہو جاتے ہیں۔ ایسے میں جامعہ سینٹر فار ڈسٹنٹس اینڈ اوپن لرننگ کے ذریعے گریجویٹ اور پوسٹ گر یجویٹ کرکے وہ ریٹائرمنٹ کے بعد اپنے لئے کام کے اچھے متبادل پا سکیں گے۔ جامعہ کے وائس چانسلر پروفیسر احمد نے کہا، یہ ہمارا اجتماعی تاثر ہے کہ ہماری فوج کے جوان ملک کی حفاظت کے لئے اپنی ہر چیز نچھاور کرنے کو ہمیشہ تیار رہتے ہیں تو ہمارا بھی فرض ہے کہ ہم جتنا بھی ہو سکے ان کے مستقبل کی ضمانت کے لئے کچھ کریں۔

انہوں نے اسے جامعہ ملیہ کے لئے ایک نادر موقع بتایا کہ اسے تینوں فوجوں کے جوانوں کو تعلیمی سہولیات مہیا کرنے کا موقع ملا ہے۔ انہوں نے کہا، یہ ہمارے لئے خوشی اور فخر کی بات ہے۔ 160مفاہمت کی یادداشت پر دستخط کئے جانے کے موقع پر وزارت دفاع انٹری گریٹیڈ ہیڈ کوارٹرکے ڈائریکٹر جنرل لیفٹیننٹ جنرل گوپال آر اور اضافی ڈائریکٹر جنرل میجر جنرل سدھاکرجی بھی موجود تھے۔ اس موقع پر جامعہ ملیہ اسلامیہ کے پرو وائس چانسلر شاہد اشرف اور رجسٹرار اے پی صدیقی سمیت تمام محکموں کے ڈین موجود تھے۔ فوج کی طرف سے بھی افسران کی ایک بڑی تعداد نے شرکت کی۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز